1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

سائنس اور ماحول

خوابوں کو کمپیوٹر سکرین پر دیکھنا ممکن ہو گیا

جاپانی ماہرین نے دعویٰ کیا ہے کہ اب انسانی تخیلات اورخوابوں کو کمپیوٹر سکرین پر دیکھا جا سکے گا۔ خوابوں اور سوچوں کو کمپیوٹر سکرین پر دیکھنے کے لئے ٹیکنالوجی تیار کرلی گئی ہے۔

default

دنیا میں پہلی مرتبہ یہ ممکن ہو جائے گا کہ عام انسانوں کی دماغی سرگرمیوں کو براہ راست دیکھا جاسکے گا

یہ ٹیکنالوجی ATR کمپیوٹینل نیورو سائنس لیبارٹریز کے طبی ماہرین نے تیار کی ہے جس سے متعلق تحقیقی رپورٹ امریکی جریدے نیورو نے شائع کی ہے۔

Schlafende

اس ٹیکنالوجی کے ذریعے صرف اُن خاکوں کو کمپیوٹر سکرین پر دیکھا جاسکے گا جو انسانی دماغ میں ہوں گے



ماہرین کے مطابق فی الوقت اس ٹیکنالوجی کے ذریعے صرف اُن خاکوں کو کمپیوٹر سکرین پر دیکھا جاسکے گا جو انسانی دماغ میں ہوں گے لیکن اسی تکنیک کے ذریعے آگے چل کران اشکال اور خوابوں کو بھی مکمل وضاحت کے ساتھ دیکھا جاسکے گا جو انسانی ذہن میں ہوں گے۔

ماہرین نے کہا ہے کہ ایسا ہونے سے دنیا میں پہلی مرتبہ یہ ممکن ہو جائے گا کہ عام انسانوں کی دماغی سرگرمیوں کو براہ راست دیکھا جاسکے گا۔

Berlinale Filmszene Sleep Dealer

آگے چل کران اشکال اور خوابوں کو بھی مکمل وضاحت کے ساتھ دیکھا جاسکے گا جو انسانی ذہن میں ہوں گے۔



ماہرین کے مطابق اس ٹیکنالوجی کے ذریعے تیار ہونے والی ویڈیو کو ریکارڈ کرنا اور اس کا ری پلے بھی ممکن ہوگا۔

تحقیقی ماہرین کی ٹیم کے سربراہ Yukiyasu Kamitani نے بتایا کہ خاکوں اور تصویروں سے متعلق دماغی سگنلز کو وصول کرکے اس ٹیکنالوجی کے ذریعے خوابوں کو کمپیوٹر سکرین پر لانے میں اصولی کامیابی حاصل کی جا چکی ہے۔ اس ضمن میں ہونے والے تجربات کے دوران ماہرین نے چھ مختلف الفاظ اور حروف کو، جو دماغ میں تھے ، سکرین پر دکھانے میں کامیاب رہے۔

Games Convention in Leipzig 2008

دماغی سگنلز کو وصول کرکے اس ٹیکنالوجی کے ذریعے خوابوں کو کمپیوٹر سکرین پر لانے میں اصولی کامیابی حاصل کی جا چکی ہے۔

اس تحقیق میں سب سے پہلے زیر مطالعہ افراد کو 400 مختلف تصاویر دکھائی گئیں اور پھر ایک چھ حرفی لفظ ’NEURON‘ کے حروف دکھائے گئے جسے انسانی ذہن نے دوبارہ جوڑ کر یہی لفظ تیار کر لیا۔ اسی دوران سائنسدانوں نے اس مکمل لفظ کو کمپیوٹر سکرین پر بھی دیکھا۔

Computer CeBIT USA

اس جدید ترین کمپیوٹر سوفٹ وئیر کی مدد سے بعد میں مشکل اور پیچیدہ خوابوں کو بھی کمپیوٹر سکرین پر دیکھا جا سکے گا۔

محققین کو امید ہے کہ اس جدید ترین کمپیوٹر سوفٹ وئیر کی مدد سے بعد میں مشکل اور پیچیدہ خوابوں کو بھی کمپیوٹر سکرین پر دیکھا جا سکے گا۔ سائنسدانوں کی رائے میں خوابوں کا تعلق انسانی آنکھ کی حرکات سے بنتا ہے تاہم اب تک اُس حیاتیاتی عمل کا تفصیلی علم نہیں ہو پایا جو ان خوابوں کا محرک بنتا ہے۔ ایک اور دلچسپ حقیقت یہ ہے کہ بہت سے انسانی ذہنوں کے مطالعے سے معلوم ہوا ہے کہ عام انسانوں کے عام ترین خواب بھی عمومی انسانی پریشانیوں سے متعلق ہی ہوتے ہیں۔