1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

سائنس اور ماحول

خلائی سفر: دو لاکھ ڈالر میں خلا کی سیر

اب تک زمین کے مدار سے باہر خلائی علاقہ صرف سائنسدانوں کی ریسرچ کے لئے وقف تھا لیکن مستقبل میں ایسی پلاننگ کی جا رہی ہے کہ اِس طرف بھی شوقین حضرات کے لئے کمرشل بنیادوں پر پروازوں کا سلسلہ شروع کیا جائے۔

default

نجی کمپنی کا تیار شدہ خلائی جہاز سپیس شپ ون: ابتدائی پرواز کے دوران

ایک امریکی ادارے نے عنقریب خلا میں سیر و سفر کی سہولتیں فراہم کرنے کا پروگرام بنایا ہے۔ بے وزنی کی کیفیت کے پانچ منٹوں اور خلا سے زمین کی جھلک دیکھنے کی قیمت دو لاکھ امریکی ڈالر ہو گی۔

’’ورجن گلیکٹک‘‘ نامی اِس امریکی ادارے نے رواں ہفتے پیر کو امریکی ریاست وِسکونسن میں ایک فضائی شو کے دوران اپنا دو حصوں والا ’’وائٹ نائٹ ٹو‘‘ نامی وہ طیارہ پہلی مرتبہ عوام کے سامنے پیش کیا، جس پر سے خلائی جہاز اپنی پرواز شروع کرے گا۔ اِس طیارے کی مدد سے ’’سپیس شپ ٹو‘‘ نامی خلائی جہاز کو پندرہ ہزار دو سو چالیس میٹر کی بلندی تک پہنچایا جائے گا۔ اِس بلندی سے خلائی جہاز آواز سے بھی چار گنا رفتار کے ساتھ خلا کی جانب اپنے سفر کا آغاز کرے گا۔

Stephen Hawking

پروفیسر سٹیفن ہاکنگ بھی خلائی سفر کا شوق رکھتے ہیں۔

اِس خلائی جہاز میں چھ مسافروں کے بیٹھنے کی گنجائش ہو گی اور یہ خلا میں مختصر قیام کے بعد ایک باقاعدہ خلائی جہاز ہی کی طرح زمین پر واپس پہنچ جائے گا۔ سفر کے آغاز سے لے کر دوبارہ زمین پر واپس اُترنے تک اِس پرواز کا دورانیہ تقریباً دو گھنٹے اور تیس منٹ ہو گا۔ امریکہ میں جس فضائی شو کے دوران اِس طیارے کو پرواز کرتے دکھایا گیا، اُس میں اِسے تیار کرنے والی دونوں شخصیات یعنی انجینئر برٹ روٹن اور برطانوی ارب پتی رچرڈ برینسن بھی موجود تھیں۔

Geschichte geschrieben

سپیس شپ ون کی خلا تک کامیاب پرواز کے بعد زمین پر عملے کی تصویر

ابھی یہ واضح نہیں ہے کہ خلا میں سفر کا یہ سلسلہ کب سے شروع ہو سکے گا۔ اِس سال موسمِ خزاں تک ’’وائٹ نائٹ ٹو‘‘ کی مزید آزمائشی پروازوں کا پروگرام بنایا گیا ہے۔ اِس کے بعد ’’سپیس شپ ٹو‘‘ کی آزمائشی پروازوں کا سلسلہ شروع ہو گا۔

’’ورجن گلیکٹک‘‘ کے ہاں ابھی سے تقریباً تین سو افراد اِس خلائی سفر کے لئے اپنی نشستیں محفوظ کروا چکے ہیں، جن میں ممتاز ماہرِ طبیعیات سٹیفن ہاکنگ اور فلم ’’سپر مین‘‘ کے ہدایتکار برائن سنگر بھی شامل ہیں۔ ا یک ٹکٹ کی قیمت دو لاکھ ڈالر رکھی گئی ہے۔

منگل اٹھائیس جولائی کو دبئی میں بتایا گیا کہ عرب سرمایہ کار ادارہ آبار 280 ملین ڈالر کے ساتھ ’’ورجن گلیکٹک‘‘ میں سرمایہ کاری کرے گا اور اِس منصوبے کے 32 فیصد حصص کا مالک ہو گا۔