1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

حملہ آور یونس ابو یعقوب کو مار دیا ہے، ہسپانوی پولیس

کاتالونیا کی پولیس نے اس کی باقاعدہ طور پر تصدیق کر دی ہے کہ بارسلونا حملے کا مفرور ملزم یونس ابو یعقوب ایک پولیس کارروائی کے دوران ہلاک کر دیا گیا ہے۔ اس کی ہلاکت بارسلونا کے نواحی قصبے میں ہوئی ہے۔

پولیس نے اس کی باقاعدہ طور پر تصدیق کی ہے کہ بارسلونا حملے کے مفرور ملزم یونس ابو یعقوب کو ہلاک کر دیا گیا ہے۔ قبل ازیں بعض مقامی ذرائع نے بتایا تھا کہ بارسلونا کے نواحی علاقے سوبیراٹس میں ایک شخص کو گولی مار کر ہلاک کیا گیا ہے، جو امکاناً یونس ابو یعقوب ہو سکتا ہے۔ یونس بارسلونا حملوں کا مفرور قرار دیا جاتا ہے اور اُسی نے ایک چوری شدہ وین لاس رامباس کے علاقے میں پیدل چلنے والوں پر چڑھائی تھی۔ اس حملے میں ہلاک ہونے والوں کی تعداد پندرہ ہو چکی ہے۔

اسپین، دہشت گردی سے متاثرہ افراد کے لیے خصوصی دعائیہ تقریب

اسپین: دہشت گردانہ حملے کے متاثرین میں درجنوں ممالک کے شہری

بارسلونا حملے کی ذمہ داری ’ داعش‘ نے قبول کر لی

بارسلونا میں وین کے ذریعے دہشت گردانہ حملہ، 13 افراد ہلاک

 یونس نے اس آپریشن میں ہلاک ہونے کی شناخت کو ابتداء میں مخفی رکھا تھا۔ آپریشن کے دوران ہی یونس ابو یعقوب کے مارے جانے کی خبر پھیل گئی تھی۔

مقامی ہسپانوی پبلک ٹیلی وژن نے بھی ہلاک ہونے والے کو بارسلونا کا حملہ آور قرار دیا ہے۔ سرکاری ٹیلی وژن نے تفتیشی عمل میں شامل افراد کے ذرائع کے حوالے سے رپورٹ کیا ہے کہ ہلاک ہونے والا یقینی طور پر یونس ابو یعقوب ہے۔ مفرور ملزم کو ہلاک کرنے کے دوران کاتالونیا کی پولیس نے ان ٹیلی وژن رپورٹوں پر کسی قسم کا تبصرہ کرنے سے گریز کیا تھا۔

 Spanien | mutmaßlicher Attentäter Younes Abouyaaqoub erschossen (Getty Images/AFP/L. Gene)

یونس ابو یعقوب کی ہلاکت کے مقام پر پولیس اپنا تفتیشی عمل مکمل کرتے ہوئے

آپریشن کے  دوران جب یونس ابو یعقوب کو ہلاک کیا گیا تب پولیس اُس کے قریب جانے سے گریز کر رہی تھی کیونکہ انہیں شبہ تھا کہ مفرور ملزم بارودی جیکٹ پہنے ہوئے ہے اور وہ پھٹ سکتی ہے۔ پولیس نے اس ہلاک ہونے والے کی تلاشی کے لیے روبوٹ استعمال کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ ہسپانوی پولیس کے بم اسکواڈ کے پاس ایسے روبوٹ موجود ہیں۔

ویڈیو دیکھیے 01:12

جب اسپین میں حملے ہوئے

سو بیراٹس کا قصبہ بارسلونا سے پینتالیس کلومیٹر کی دوری پر مغرب میں واقع ہے۔ پولیس بارسلونا کے ساحلی اور نواحی علاقوں میں یونس ابو یعقوب کی تلاش پیر سے جاری رکھے ہوئے تھی۔ یہ بائیس برس کا مراکشی نژاد باشندہ تھا۔ پولیس نے بتایا ہے کہ اُس کے پاس پورے شواہد موجود ہیں کہ پیدل افراد پر چلتی وین چڑھانے والا مبینہ ملزم یونس ابو یعقوب ہی تھا۔

 

DW.COM

Audios and videos on the topic