1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

معاشرہ

حضرت عیسٰی کا بلند ترین مجسمہ پولینڈ میں

تقریباً 15000 سے زائد مسیحی زائرین اور سیاحوں نے اتوار کو پولینڈ کے مغربی قصبے کا رخ کیا تاکہ یسوع مسیح کے دنیا میں سب سے طویل القامت مجسمے کی نقاب کُشائی میں شریک ہو سکیں۔

default

پولینڈ کے ٹی وی چینلز کے مطابق اس موقع پر لوگوں کا ایک جم غفیر مذہبی عبارات پر مبنی بینرز اور پلے کارڈز اٹھائے ہوئے تھا، جن پر ’یسوع مسیح کائنات کے بادشاہ ہیں‘ تحریر تھا۔ کارڈینل Henryk Gulbinowic کی زیر صدرات ہونے والی نقاب کُشائی کی اس رسم میں بشپ سٹیفن ریگمنٹ نے اس مجسمے کو یسوع مسیح پر ایمان کی سب سے واضح نشانی قرار دیا۔

33 میٹر یعنی 108 فٹ بلند یہ مجسمہ برازیل کے دالحکومت ریو دے جینیرو

Auf dem Berg Corcovado in Rio de Janeiro in Brasilien steht die Christus Statue

برازیل کے دالحکومت ریو دے جینیرو میں نصب یسوع مسیح کا مجسمہ

میں نصب مسیح کے اُس مجسمے سے تین میٹر زیادہ بلند ہے، جسے اب تک سب سے طویل القامت ہونے کا اعزاز حاصل تھا۔ کہا یہ جاتا ہے کہ اس کی 33میٹر بُلندی در اصل یسوع مسیح کی 33 برس کی عمر سے منسوب کی گئی ہے۔ 440 ٹن کے اس مجسمے کے سر پر نصب تین میٹر کا سونے سے بنا تاج بھی ہے، جس کے بعد اس مجسمے کی کُل لمبائی 36 میٹر تک جا پہنچی ہے۔

نقاب کُشائی کی اس تقریب میں شامل اس مجسمے کا خیال پیش کرنے والے فادر ساواڈسکی نے اس امید کا اظہار کیا کہ کرائسٹ دی کنگ کینھولک آبادی کی اکثریت کے حامل پولینڈ میں زائرین کو خوش آمدید کہیں گے۔ تاہم ان کا یہ کہنا تھا کہ اس مجسمے کی تنصیب سیاحت کے فروغ کے لئے نہیں بلکہ مذہبی مشن کو پورا کرنے کے لئے کی گئی ہے۔

دوسری جانب ایک ٹی وی رپورٹ کے مطابق جرمنی اور پولینڈ کی سرحد پر بہت سے لوگ جمع ہیں تاکہ بطور یادگار سرحد سے صرف 90 کلو میڑ دور نصب اس مجسمہ کی تصاویر لے سکیں۔

رپورٹ: عنبرین فاطمہ

ادارت : امجد علی

DW.COM