1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

جنگجوؤں کا حملہ، نیٹو کے گیارہ ٹینکر تباہ

پاکستان کے شمالی مغربی علاقوں میں نیٹو کے گیارہ ٹینکرز کو نذر آتش کر دیا گیا ہے۔ ان ٹینکرز میں ایندھن افغانستان لے جایا جا رہا تھا۔ اس حملے میں چار افراد ہلاک بھی ہو گئے۔

default

خیبرپختونخوا کے دارالحکومت پشاور کی پولیس نے خبررساں ادارے اے ایف پی کو بتایا کہ یہ حادثہ صوبائی دارالحکومت کے نواح میں پیش آیا، جہاں ایک ٹرمینل پر باغیوں نے حملہ کر دیا۔ اعلیٰ پولیس افسر امتیاز شاہ نے بتایا،’دو درجن سے زائد جنگجوؤں نے ٹرمینل میں داخل ہو کر وہاں کھڑے بیس میں سے بارہ ٹرکوں میں دھماکہ خیز مواد نصب کر دیے۔ یہ ٹینکر افغانستان میں تعینات غیر ملکی افواج کے لیے ایندھن لے کر براستہ پاکستان وہاں جا رہے تھے۔‘

Extremisten zünden 27 Nato-Tanklaster an

پاکستان میں نیٹو آئل ٹینکروں پر حملے کوئی نئی بات نہیں

امتیاز شاہ کے مطابق گیارہ ٹرک تباہ ہو گئے جبکہ ایک ٹرک میں دھماکہ خیز مواد نہ پھٹ سکا، اس لیے وہ بچ گیا۔ انہوں نے مزید بتایا کے اس دوران جنگجوؤں نے دو محافظوں اور دو ڈرائیوروں کو مزاحمت کرنے پر گولیاں مار کر ہلاک کر دیا جبکہ ایک ڈرئیوار زخمی ہو گیا،’حملہ آور جنگجو تھے لیکن ہمیں ابھی تک یہ معلوم نہیں ہو سکا کہ ان کا تعلق کس گروہ سے ہے۔‘

ایک اور پولیس افسر نے بتایا کہ حملہ آور حملے کے بعد فرار ہونے میں کامیاب ہو گئے۔ اگرچہ ابھی تک کسی نے اس حملے کی ذمہ داری قبول نہیں کی ہے تاہم طالبان باغی اس طرح کے حملے کرتے رہتے ہیں۔

رپورٹ: عاطف بلوچ

ادارت: عاطف توقیر

DW.COM

ویب لنکس