1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

جرمن عوام میرکل کی قدر کریں، باراک اوباما

امریکی صدر باراک اوباما نے جمعرات کے روز جرمن چانسلر انگیلا میرکل سے ملاقات سے قبل اپنے ایک انٹرویو میں کہا کہ جرمن عوام چانسلر میرکل کی ’عظیم ساکھ‘ کے معترف رہیں اور قدر کریں۔

جمعرات کے روز اپنے دورِ صدارت کے آخری دورہ یورپ کے دوران برلن میں ایک انٹرویو میں اوباما نے کہا کہ دنیا میں جمہوری اقدار کے تحفظ کے لیے عدم مساوات کو کم کرنا ہو گا۔ ان کا کہنا تھا کہ عالمی سطح پر ایسے اقدامات کی ضرورت ہے، جن کے تحت معاشی تفریق میں کمی واقع ہو، کیوں کہ اسی طرح سے دنیا کا جمہوری ڈھانچہ قائم رہ سکتا ہے۔

صدر اوباما جنوری میں اپنی موجودہ مدتِ صدارت مکمل کر رہے ہیں۔ تاہم حالیہ انتخابات میں ریپبلکن امیدوار ڈونلڈ ٹرمپ کی غیرمتوقع فتح کے تناظر میں دنیا بھر میں متعدد امور پر امریکی موقف کے مستقبل پر سوالات اٹھ کھڑے ہوئے ہیں۔

Deutschland | US-Präsident Obama wird von Bundeskanzlerin Merkel in Empfang genommen (Reuters/F. Bensch)

اوباما نے برلن میں میرکل سے ملاقات کی

صدر اوباما نے گزشتہ روز ایک عشائیے پر بھی چانسلر میرکل کے ساتھ قریب تین گھنٹے طویل غیررسمی بات چیت کی تھی، تاہم جمعرات کو دونوں رہنماؤں کے درمیان رسمی بات چیت جاری ہے، جس میں شامی اور یوکرائنی تنازعے کے ساتھ ساتھ دیگر اہم عالمی امور پر بھی گفت گو ہو رہی ہے۔ اس ملاقات سے قبل جرمن نشریاتی ادارے اے آر ڈی اور جریدے ڈیئر اشپیگل کو دیے گئے اپنے ایک انٹرویو میں صدر اوباما نے کہا کہ اگر عالمی اقتصادیات نے ان افراد کو نظرانداز کر دیا جو معاشی طور پر پیچھے رہ گئے ہیں، تو اس سے عدم مساوات مزید بڑھے گی۔

بدھ کو برلن پہنچنے والے امریکی صدر اوباما جمعے کے روز تک جرمنی ہی میں قیام کریں گے۔ اس دوران وہ برطانوی وزیر اعظم ٹریزا مے، فرانسیسی صدر فرانسوا اولانڈ، ہسپانوی وزیر اعظم ماریانو راخوئے اور اطالوی وزیر اعظم ماتیو رینزی سے بھی ملیں گے۔ اس دورے کے دوران توقع ہے کہ وہ یورپی رہنماؤں کو یہ یقین دلانے کی کوشش کریں گے کہ ڈونلڈ ٹرمپ کی فتح کے باوجود امریکا یورپ کے ساتھ قریبی تعلق قائم رکھے گا۔