1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

جرمن بینکوں کو حکومتی تحویل میں لئے جانے کا امکان

اگر امریکی موٹر ساز ادارے اور بینک مالی خسارے سے دوچار ہیں تو جرمن موٹر کار کمپنیوں اور بینکوں کے حال بھی کچھ اچھے نہیں ہیں۔ جرمنی میں بینکوں کی ابتر مالی حالت کو دیکھتے ہوئے حکومت حرکت میں آگئی ہے۔

default

ہائپو ریئل ایسٹیٹ جیسے جرمن بینکوں کو دیوالیہ ہونے سے بچانے کے لئے جرمن حکومت بینکوں کی نیشنلائزیشن کے موڈ میں ہے

جرمن حکومت نے ایک ایسا قانونی مسودہ تیار کیا ہے جس کی منظوری کے بعد ان بینکوں کو اب حکومتی تحویل میں لیا جانا ممکن ہوسکے گا۔

کہتے ہیں جیسے مسائل، ویسے حل۔ جرمن کابینہ نے ایک ایسے بل کو منظوری دے دی ہے جس کے نتیجے میں حکومت کے پاس مالیاتی خسارے سے دوچار جرمن بینکوں کو اپنی تحویل میں لینے یعنی نیشنلائز کرنے کے باضابطہ اختیارات ہوں گے۔

امریکہ کی طرز پر جرمنی بھی مالیاتی بحران کے شکار بینکوں کو نیشنلائز کرنے کے موڈ میں نظر آرہا ہے۔ ایسا جرمنی میں پہلے کبھی نہیں ہوا لیکن اب یہ بالکل ممکن ہے۔ بھلا کیسے؟

Deutsche Bank in Frankfurt

جرمنی کا ڈوئچے بینک دنیا بھر میں مشہور ہے

حتمی کامیا بی یعنی باقاعدہ طور پر نئے بل کا قانون بننے کے لئے جرمن پارلیمان سے اسے منظوری ملنا اور اس پر صدر کے دستخط ہونا لازمی ہیں۔ قانون بن جانے کے بعد حکومت بحران کے شکار Hypo Real Estate جیسے اداروں کو اپنی تحویل میں لے سکے گی۔ ہائپو ریئل ایسٹیٹ کو پہلے ہی قرضوں کی ریاستی ضمانت کے تحت ایک سو ارب یوروز کی خطیر رقم مل چکی ہے۔

G7 Gipfel in Rom

جرمن وزیر خزانہ پیر شٹائن بروٴک کے مطابق نئے قانون کا مقصد مالی خسارے سے دوچار بینکوں کو دیوالیہ ہونے سے بچانا ہے

اس حوالے سے جرمن وزیر خزانہ پیر شٹائن بروٴک نے دارالحکومت برلن میں کہا کہ نئے قانون کا مقصد ہائپو ریئل ایسٹیٹ جیسے اداروں کو دیوالیہ ہونے سے بچانا ہے۔ ’’برطانیہ میں تیزی سے بینکوں کو نیشنلائز کیا گیا۔ دوسرے ملک بھی ایسا ہی کررہے ہیں۔ میں کہتا ہوں کہ ہم جرمنی میں یہی راستہ اختیار کرکے آگے کیوں نہیں بڑھ سکتے ہیں؟ بینکوں کو سرکاری تحویل میں لینے کی بحث کو اسی نقطہء نگاہ سے دیکھنے کی ضرورت ہے۔‘‘

جرمن وزیر خزانہ نے مزید کہا کہ نئے قانونی مسودے کی منظوری کے بعد جرمن معیشت میں ہلچل پیدا ہوگی۔

BdT Merkel auf Spielwarenmesse mit neuem Weggefährten

جرمن چنسلر انگیلا میرکل بھی نئے قانون کے حق میں ہیں

وفاقی جرمن چانسلر انگیلا میرکل بھی بینکوں کی نیشنلائزیشن کے حق میں ہیں۔ ’’ہم آزاد تجارت کے خلاف نہیں ہیں۔ ہم نے نیا قانونی مسودہء اس وجہ سے تیار کیا ہے تاکہ ہماری معیشت صحیح طریقے سے پٹری پر آگے بڑھ سکے۔ جو لوگ ٹیکس ادا کررہے ہیں، ہمیں اُن کے بارے میں سوچنا ہوگا۔ نئی صورتحال میں ہمارے پاس ہائپو ریئل ایسٹیٹ جیسے اداروں کو اپنی تحویل میں لینے کا اختیار ہوگا۔‘‘

Opelwerk Eisenach

جرمن موٹر ساز کمپنیاں بھی زبردست مالی بحران کی شکار ہیں اور ملازمتوں میں بڑے پیمانے پر کٹوتی کا اعلان کرچکی ہیں

جرمنی جس راہ پر گامزن ہورہا ہے اس راہ کو امریکہ، برطانیہ اور آئر لینڈ جیسے ملک پہلے ہی اختیار کرچکے ہیں۔ جرمن بینکوں کو دیوالیہ ہونے سے بچانے کے لئے نیا مجوزہ قانون کیا رنگ لائے گا فی الحال اس کا اندازہ لگانا جلد بازی ہوگی۔

بینکوں کی طرح جرمن موٹر ساز کمپنیاں بھی بحران کی شکار ہیں۔ امریکی موٹر ساز کمپنی کی جرمن شاخ اوپیل نے یہ اعلان کیا تھا کہ وہ اپنے کاروبار میں طویل المدتی کامیابی کے لئے ممکنہ شراکت داری پر غور کرنے کے لئے تیار ہے۔ ابھی منگل کو ہی امریکی موٹر ساز کمپنی جنرل موٹرز نے اس سال کے آخر تک دنیا بھر میں سینتالیس ہزار ملازمتوں میں کٹوتی کرنے کے اپنے منصوبے کا اعلان کرکے آنے والی مزید مشکلات کا تعارف کرایا تھا۔

اس وقت امریکہ اور جرمنی کے علاوہ جاپان کی موٹر ساز صنعتت بھی زبردست مالی بحران کی شکار ہے۔

ملتے جلتے مندرجات