1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

معاشرہ

جرمن بشپ نے جنسی زیادتی کے الزامات مسترد کردئے

جرمن پولیس نے متنازعہ کیتھولک بشپ والٹر مِکسا کے سیکس اسکینڈل میں ملوث ہونے کے شبے پر تحقیقات شروع کردی ہیں۔ تاہم 68 سالہ بشپ نے الزامات مسترد کئے ہیں۔

default

بشپ والٹر مِکسا

ان الزامات کی ذد میں آنے کے بعد آؤگسبرگ کے بشپ نے گزشتہ ماہ اپنے عہدے سے مستعفی ہونے کی درخواست دی تھی تاہم ابھی تک اسے منظور نہیں کیا گیا۔ جرمن خبر رساں اداروں نے کلیسائی ذرائع کا حوالہ دیتے ہوئے بتایا ہے کہ متوقع طور پر پاپائے روم بینیڈکٹ شانز دہم ہفتے کے دن والٹر کا استعفی قبول کر لیں گے۔

Walter Mixa

بشپ والٹر مکسا کا استعفی ابھی تک قبول نہیں کیا گیا

والٹر پرالزام ہے کہ جب وہ سن 1996ء تا 2005ء کے دوران Eichstaett کے بشپ تھے توانہوں نےایک لڑکے کے ساتھ جنسی زیادتی کی تھی۔ اطلاعات کے مطابق کلیسائی حکام نے پولیس کو والٹر کے بارے میں معلومات فراہم کی ہیں۔ دوسری طرف ایک جرمن اخبار کوانٹرویو دیتے ہوئےEichstaett کے کلیسائی ترجمان نے بتایا ہے کہ انہوں نے کسی کو بھی معلومات فراہم نہیں کی لیکن کلیسائی اصولوں کے مطابق ایک سادہ سی شکایت درج کروائی ہے۔

والٹر کے وکیل نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ان کے مؤکل نے تمام الزمات مسترد کردئے ہیں اور وہ استغاثہ سے بھر پور تعاون کرتے ہوئے خود کو بے گناہ ثابت کریں گے۔ والٹرمکسا اس وقت تعطیلات پر ہیں اور انتظار کر رہے ہیں کہ ان کا استعفی قبول کیا جاتا ہے یا نہیں۔

رپورٹ: عاطف بلوچ

ادارت: شادی خان سیف

DW.COM