1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

جرمنی کے خصوصی مندوب کا پہلا دورہ پاکستان

پاکستان اور افغانستان کے لئے مقرر کئے گئےجرمنی کے خصوصی مندوب بیرنڈموٹزیل بُرگ اپنے پہلے دورہ پاکستان پرجمعہ 20 مارچ کی شام اسلام آباد پہنچے۔ جہاں انہوں نے پاکستانی وزیر خارجہ سے ملاقات کی۔

default

پاکستانی وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی اورBernd Mützelburg کے درمیان ہونے والی ملاقات میں نے امن و امان کی بحالی کے لئے مکالمت، مفاہمت اور تعمیر وترقی کے عمل کو مزید تیز کرنے کی ضرورت پر اتفاق کیا گیا۔

پاکستانی وزارت خارجہ کے مطابق وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی سے اپنی ملاقات میں بیرنڈموٹزیل بُرگ نے جرمن حکومت کی جانب سے پاکستان کے ساتھ مل کر کام کرنے کے عزم کا اظہار کیا۔ وزارت خارجہ کی جانب سے جاری کئے جانے والے بیان میں مزید کہا گیا ہے دونوں رہنماؤں کے درمیان ہونے والی ملاقات میں پاکستان اور جرمنی کے دوطرفہ تعلقات اور خطہ میں دہشت گردی و انتہا پسندی کے خاتمہ کیلئے کئے گئے اقدامات زیر بحث لائے گئے۔

Bernd Mützelburg

جرمن حکومت نے بیرنڈموٹزیل بُرگ کو فروری میں خصوصی مندوب برائے پاکستان اور افغانستان مقرر کیا تھا

دونوں رہنماؤں کے درمیان اس بات پر اتفاق کیا گیا کہ خطے میں دہشت گردی سے نمٹنے کے لئے جامع حکمت عملی کی ضرورت ہے اور صرف طاقت کے استعمال سے اس مسئلے کو حل نہیں کیا جاسکتا۔ اسکے علاوہ علاقے میں امن و امان کی بحالی کے لئے مکالمت، مفاہمت اور تعمیر وترقی کے عمل کو مزید تیز کرنے کی ضرورت پر بھی اتفاق کیا گیا۔

امریکی حکومت کی جانب سے رچرڈ ہالبروک کی پاکستان اور افغانستان کے لئے خصوصی ایلچی کے طور پر تقرری کے بعد جرمن حکومت نے بھی گزشتہ ماہ برنڈ موٹزیل بورگ کو پاکستان اور افغانستان کے لئے خصوصی مندوب مقرر کیا ہے۔ افغانستان میں قیام امن کے لئے موجود بین الاقوامی فوج میں جرمنی کے بھی تین ہزار پانچ سو فوجی خدمات انجام دے رہے ہیں۔ جبکہ اسی برس اگست میں ہونے والے انتخابات کے موقع پر جرمنی اپنے مزید 600 فوجی افغانستان بھیجنے کا ارادہ رکھتا ہے۔