1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

فن و ثقافت

جارج مائیکل کی موت قدرتی وجوہات کے باعث ہوئی: میڈیکل رپورٹ

ایک نئی تفصیلی میڈیکل رپورٹ کے مطابق برطانوی گلوکار جارج مائیکل کی موت قطعی طور پر ’قدرتی وجوہات‘ کے باعث ہوئی تھی۔ جارج مائیکل گزشتہ برس کرسمس کے دن اپنے گھر پر مشکوک حالات میں مردہ پائے گئے تھے۔

Sänger George Michael (picture alliance/PA Wire/C. Radburnd)

جارج مائیکل کی دو ہزار گیارہ میں لی گئی ایک تصویر

برطانوی دارالحکومت لندن سے منگل سات مارچ کو ملنے والی نیوز ایجنسی ایسوسی ایٹڈ پریس کی رپورٹوں کے مطابق عالمی سطح پر شہرت یافتہ اس برطانوی گلوکار کی اچانک موت کی وجوہات کی چھان بین کرنے والے ایک طبی ماہر نے اپنی رپورٹ میں کہا ہے کہ جارج مائیکل کا انتقال دل کی بیماری اور جگر پر چربی کے طبی اثرات کی وجہ سے ہوا۔

برطانوی کاؤنٹی آکسفورڈشائر کے طب قانونی کے محکمے کے سینیئر اہلکار ڈیرن سالٹر کے مطابق جارج مائیکل کی لاش کے انتہائی تفصیلی پوسٹ مارٹم اور اس دوران حاصل کیے جانے والے نمونوں کے تجزیے سے پتہ چلا ہے کہ اس پاپ گلوکار کی موت کی وجہ ’کارڈیومایوپیتھی‘، ’مایوکارڈائٹس‘ اور جگر کے ارد گرد جمع ہو جانے والی چربی بنے۔

جارج مائیکل کا ’لاسٹ کرسمس‘

طبی اصطلاح میں ’کارڈیومایوپیتھی‘ ایک ایسی جسمانی حالت ہوتی ہے، جس میں انسانی دل کی خون کو پمپ کرنے کی صلاحیت محدود ہو جاتی ہے۔ اسی طرح ’مایوکارڈائٹس‘ کسی مریض کے دل کی ایسی حالت کو کہتے ہیں، جس میں ایک عضو کے طور پر دل کے پٹھے سوزش کا شکار ہو جاتے ہیں۔

George Michael erhält Obit Musik Award (picture-alliance/AP Photo/A. Greth)

جارج مائیکل کی انیس سو نواسی میں ایک ایوارڈ وصول کرتے ہوئے لی گئی ایک تصویر

اس پس منظر میں اپنی بہت مفصل اور طویل طبی چھان بین کے نتائج کے حوالے سے ڈیرن سالٹر نے منگل سات مارچ کے روز کہا، ’’جارج مائیکل کی موت قطعی طور پر قدرتی وجوہات کی بناء پر ہوئی۔ اس لیے اب ان کی موت کے اسباب کے طبی اور قانونی ماہرین کی کسی باقاعدہ تفتیشی کمیٹی کے ذریعے تعین کی کوئی ضرورت نہیں ہے۔‘‘

عشروں تک مغربی پاپ موسیقی کی دنیا پر گہرے اثرات مرتب کرنے والے انتہائی کامیاب گلوکار جارج مائیکل 53 برس کی عمر میں گزشتہ برس 25 دسمبر کے روز، جب دنیا بھر میں کرسمس کا مسیحی تہوار منایا جا رہا تھا، جنوبی انگلینڈ کی کاؤنٹی آکسفورڈشائر میں اپنے گھر میں مردہ پائے گئے تھے۔

ان کی لاش کا ایک ابتدائی پوسٹ مارٹم بھی کیا گیا تھا تاہم اس پوسٹ مارٹم کے نتائج کی روشنی میں تب جارج مائیکل کی اچانک موت کے اسباب کا حتمی تعین نہیں ہو سکا تھا۔

DW.COM