1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

تین ملین مہاجرین کو امریکا سے نکالا جائے گا، نامزد امریکی صدر ٹرمپ

نامزد امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا ہے کہ وہ صدر بننے کے بعد فوری طور پر تین ملین مہاجرین کو امریکا بدر کر دیں گے۔ یہ بات انہوں نے ہفتے کے روز امریکی نشریاتی ادارے سی بی ایس سے بات کرتے ہوئے کہی۔

ٹرمپ کا کہنا تھا کہ کرمنل ریکارڈ  رکھنے والے، مجرم، گینگز سے تعلق رکھنے والے افراد اور ڈرگ ڈیلرز کو فوری طور پر امریکا سے نکال دیا جائے گا۔

ان کا کہنا تھا کہ یہ تعداد تین ملین کے قریب بنتی ہے۔ یا تو ان کو امریکا چھوڑنا پڑے گا یا پھر ان کو جیلوں میں ڈالا جائے گا۔ واضح رہے کہ ٹرمپ نے انتخابی مہم کے دوران بھی یہ بات کی تھی کہ وہ غیر قانونی مہاجرین کے خلاف سخت کارروائی کریں گے۔

 ان کے متنازعہ بیانات پر ملکی اور غیر ملکی حلقوں کی جانب سے تنقید بھی کی جاتی رہی ہے۔ ماضی میں ان کا کہنا تھا کہ وہ امریکا میں مقیم مسلمانوں پر نظر رکھنے کے لیے ان کی رجسٹریشن لازمی بنائیں گے۔

 وہ یہ بھی کہہ چکے ہیں کہ کچھ عرصے کے لیے بیرون ممالک سے مسلمانوں کے امریکا آنے پر پابندی لگا دی جائے گی۔ وہ میکسیکو کی امریکا کے ساتھ سرحد پر دیوار تعمیر کرنے کی دھمکی بھی دے چکے ہیں۔

 ٹرمپ نے آٹھ نومبر کو امریکا میں ہوئے صدارتی انتخابات میں ڈیموکریٹک امیدوار ہلیری کلنٹن کو رائے عامہ کے جائزوں اور میڈیا کی توقعات کے خلاف شکست دے دی تھی۔

 وہ جنوری میں موجودہ صدر باراک اوباما کی جگہ لیں گے۔

DW.COM