1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

کھیل

تندولکر نہ کھیلے تو فائدہ ہوگا، آفریدی

پاکستانی ٹوئنٹی 20 کرکٹ ٹیم کے کپتان شاہد آفریدی نےکہا ہے کہ ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ میں بھارتی ٹیم میں سچن تندولکر کے شامل نہ ہونے کا فائدہ دوسری ٹیموں کو پہنچے گا۔ تندولکر نے 2007ء میں اس فارمیٹ سے کناراکشی اختیار کرلی تھی ۔

default

پاکستانی ٹی 20 ٹیم کے کپتان شاہد آفریدی

Indien Cricket Sachin Tendulkar

نامور بلے باز سچن تندولکر

پاکستانی ٹیم کے کپتان شاہد خان آفریدی نے اتوار کو ایک انٹرویو میں کہا کہ گزشتہ چند برسوں میں تندولکر اپنے کھیل کے پورے عروج پر ہیں اور اگر وہ ورلڈ کپ میں شریک نہیں ہوتے تو یقینی طور پر اس کا فائدہ ایونٹ میں شامل دوسری ٹیموں کو ہوگا۔

2007ء میں بھارت کے اسٹار بلے باز راہول ڈراوڈ اور سراؤ گنگولی نے بھی ٹی 20 کرکٹ کو خیرباد کہہ دیا تھا۔

شاہد آفریدی نے کہا کہ اگر تندولکر اس ورلڈ کپ میں شریک ہوتے تو وہ بھارتی ٹیم کی جیت کے لئے بہترین مواقع فراہم کر سکتے تھے۔

’’تندولکر کی بیٹنگ میں روزانہ کی بنیاد پر نکھار آرہا ہے۔ وہ روز بروز بہتر سے بہتر ہوتا جارہا ہے۔ ٹی 20 میں وہ ایک تباہ کن قوت ہو سکتا تھا۔ تندولکر کے کھیل میں اس کی بڑھتی عمر کا کوئی اثر دکھائی نہیں دیتا۔‘‘

Shoaib Malik

ملک کو ایک سالہ پابندی کا سامنا ہے

شاہد آفریدی نے کہا کہ تندولکر اب بھی اپنے کھیل کو پہلے ہی کی طرح دلچسپی سے لیتے ہیں اور ان کی رنز کی طلب کبھی کم ہونے کا نام نہیں لیتی۔

چند روز قبل سچن تندولکر نے ٹی 20 انٹرنیشنل کرکٹ میں اپنی واپسی کی خبروں کو یکسر مسترد کر دیا تھا۔

دوسری جانب سابق پاکستانی کپتان شعیب ملک نے کرکٹ بورڈ کی جانب سے لگائی گئی ایک سالہ پابندی کے خلاف اپیل کا ارادہ ظاہر کیا ہے۔ اتوار کو ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ وہ اپیل جمع کرانے کی تیاری کررہے ہیں۔ رواں ماہ کی دس تاریخ کو پاکستانی کرکٹ بورڈ نے ان پر نظم وضبط کی خلاف ورزی کے الزامات عائد کرتے ہوئے ہرطرح کی بین الاقوامی کرکٹ پر پابندی کے ساتھ ساتھ پچیس ہزار ڈالر کا جرمانہ بھی عائد کیا تھا۔ انہوں نے کہا کہ وہ اس پابندی کے خلاف ہر طرح کی جدوجہد کریں گے۔ ملک کے مطابق انہون نے اپنے گیارہ سالہ کیریئر میں کبھی ٹیم ڈسیپلن کی خلاف ورزی نہیں کی۔ انہوں نے کہا کہ وہ اس پابندی کے خلاف اپیل کے ذریعے اپنی بے گناہی ثابت کرنا چاہتے ہیں۔

رپورٹ : عاطف توقیر

ادارت : ندیم گِل