1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

سائنس اور ماحول

بھارت میں کلوننگ کے ذریعےبچھڑی کی پیدائش

بھارتی ریاست ہریانہ کے نیشنل ڈیری ریسرچ انسٹیٹیوٹ میں 6 جون کو پیدا ہونے والی بھینس کی بچھڑی بالکل بخیریت ہے۔

default

دنیا میں سب سے پہلے کلوننگ کے ذریعے ڈولی نامی بھیڑ پیدا کی گئی تھی

گریما نامی اس بچھڑی کی پیدائش آپریشن یعنی سیزیرین کے ذریعے ہوئی، اور پیدائش کے وقت اس کا وزن 43 کلوگرام تھا۔

گریما کا وزن پیدائش سے اب تک تقریبا 500 گرام یومیہ کے حساب سے بڑھ رہا ہے۔ کرنال کے اسی تحقیقی مرکز میں اس سے قبل بھی کلوننگ کے ذریعے دنیا کی پہلی بچھڑی 6 فروری کو پیدا ہوئی تھی۔ مگر پیدائش کے وقت ہونے والے نمونیا کی وجہ سے یہ بچھڑی صرف 6 دن زندہ رہ سکی۔ اس کے علاوہ بھارتی زیر انتظام کشمیر کی شیر کشمیر یونیورسٹی آف ایگریکلچرل سائنسز اینڈ ٹیکنالوجی اور کرنال نیشنل ڈیری انسٹیٹیوٹ مل کر کشمیرمیں پائی جانے والی نایاب پشمینہ بھیڑ کی کلوننگ کی کوششیں بھی کر رہے ہیں۔ ورلڈ بنک کی فنڈنگ سے شروع ہونے والے اس پراجیکٹ میں پشمینہ بھیڑ کے کان سے حاصل کئے گئے خلئے سے کلون تیار کیا جائے گا۔

Audios and videos on the topic