1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

بھارت میں ٹرین کو آگ لگانے کے الزام میں 31 افراد قصوروار

بھارتی عدالت نے ٹرین کو آگ لگانے کے الزام میں31 افراد کو مجرم قرار دے دیا گیا ہے۔ان افراد پر سازش اور قتل کے الزامات ثابت ہوئے ہیں۔2002ء میں ریاست گجرات میں پیش آنے والے اس واقعے میں 59 ہندو زائرین ہلاک ہوگئے تھے۔

default

یہ فسادات بھارت کی آزادی کے بعد ملک میں ہونے والے بد ترین مذہبی فسادات میں سے ایک تھے۔ ان فسادات کا سلسلہ اس وقت شروع ہوا، جب بھارت کی مغربی ریاست گجرات میں گودھرا ٹرین اسٹیشن پر ہندو زائرین سے بھری ٹرین کو آگ لگا دی گئی تھی۔ اس کے نتیجے میں 59 افراد ہلاک ہوگئے تھے۔ اس واقعے کے بعد ریاست گجرات میں مسلم کش فسادات پھوٹ پڑے، جس میں دو ہزار مسلمانوں کی ہلاکت ہوئی تھی۔

NO FLASH Brandattacke auf einen vollbesetzten Zug in Godhra Indien

گجرات میں ہونے والے اس واقعے کے بعد بدترین مسلم کش فسادات پھو‌ٹ پڑے تھے

موصولہ اطلاعات کے مطابق وکیل استغاثہ جے۔ ایم۔ پانچھل نے احمدآباد کورٹ کے باہر صحافیوں کو بتایا ہے کہ عدالت نے 31 افراد کو سازش تیار کرنے اور قتل کے مقدمے میں مجرم قرار دے دیا گیا ہے جبکہ باقی 63 گرفتار شدگان کو بری کر دیا گیا ہے۔

واضح رہے کہ اس مقدمے میں 94 افراد کو عدالتی کارروائی کا سامنا تھا، جس میں سے چند کو آج مجرم قرار دیا گیا ہے۔

رپورٹ: عنبرین فاطمہ

ادارت: عدنان اسحاق

DW.COM