1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

بھارت میں نوجوان اسرائیلی خاتون کا گینگ ریپ

شمالی بھارت کے تعطیلاتی قصبے منالی میں ایک نوجوان اسرائیلی خاتون کے مبینہ گینگ ریپ کی اطلاعات ہیں۔ یہ غیر ملکی خاتون ایک قریبی شہر جانا چاہتی تھی کہ ایک گاڑی میں سوار دو مردوں نے اسے جنسی زیادتی کا نشانہ بنایا۔

پیر پچیس جولائی کے روز بھارتی شہر شملہ سے ملنے والی نیوز ایجنسی اے ایف پی کی رپورٹوں میں اعلیٰ پولیس حکام کا حوالہ دیتے ہوئے بتایا گیا ہے کہ اس 25 سالہ اسرائیلی خاتون کے خلاف اس جرم کا ارتکاب اتوار چوبیس جولائی کو علی الصبح کیا گیا۔

پولیس سپرنٹنڈنٹ پدم چند کے بقول اس خاتون نے پولیس کو بتایا کہ وہ ہمالیہ کے تعطیالتی قصبے منالی سے ایک دوسرے قریبی شہر جانا چاہتی تھی، جہاں کے لیے اس کے ساتھ اسرائیلی سیاح پہلے ہی رخصت ہو چکے تھے۔ اس خاتون نے ایک ٹیکسی سمجھ کر ایک گاڑی کو روکا، جس پر اس میں سوار افراد نے اسے گاڑی میں بٹھا لیا۔

سینیئر پولیس افسر پدم چند کے مطابق اس اسرائیلی خاتون سیاح کے بقول جس گاڑی کو وہ ٹیکسی سمجھی تھی، اس میں چھ افراد سوار تھے، جن میں سے دو مردوں نے حملہ کرتے ہوئے اسے جنسی زیادتی کا نشانہ بنایا۔ اس مبینہ گینگ ریپ کے بعد یہ مجرمان اور ان کے ساتھی اس غیر ملکی خاتون کو ایک سڑک کے کنارے اتار کر فرار ہو گئے۔

اے ایف پی نے بتایا ہے کہ اس واقعے کی اطلاع ملتے ہی پولیس نے بھارتی اور غیر ملکی سیاحوں میں بہت مقبول ہمالیہ کے اس قصبے کی گلیوں پر لگائے گئے سی سی ٹی وی کیمروں کی فوٹیج کا جائزہ لینا شروع کر دیا تھا تاکہ ملزمان کی شناخت کی جا سکے۔ پولیس ایس پی پدم چند کے مطابق اس اسرائیلی شہری کے ریپ کی اطلاع نئی دہلی میں اسرائیلی سفارت خانے کو بھی کی جا چکی ہے۔

بھارت میں حالیہ برسوں کے دوران جنسی زیادتی کے واقعات میں اضافہ ہوا ہے

بھارت میں حالیہ برسوں کے دوران جنسی زیادتی کے واقعات میں اضافہ ہوا ہے

حکام کے بقول یہ غیر ملکی سیاح، جس کے خلاف اس جنسی جرم کا ارتکاب صبح تین بجے کیا گیا، ایک مقامی ہسپتال میں زیر علاج ہے اور اسے ایک قریبی بڑے ہسپتال میں منتقل کرنے کی کوشش کی جا رہی ہے۔

اسی دوران ملکی دارالحکومت نئی دہلی سے ملنے والی نیوز ایجنسی ڈی پی اے کی رپورٹوں میں بتایا گیا ہے کہ پیر کی دوپہر تک پولیس کے تفتیشی ماہرین مبینہ طور پر اس جرم کے مرتکب دو مشتبہ افراد کو حراست میں لے چکے تھے۔

یہ بھی بتایا گیا ہے کہ یہ اسرائیلی خاتون اور اس کے ساتھی سیاح منالی سے لداخ کے علاقے کی طرف جانا چاہتے تھے۔ پولیس نے بتایا، ’’ہم نے وہ کار بھی اپنے قبضے میں لے لی ہے، جس میں ملزمان سوار تھے۔ جن دو افراد کو گرفتار کیا گیا ہے، وہ مبینہ طور پر وہی ہیں، جنہوں نے اس اسرائیلی شہری کو ریپ کیا۔ ان میں مرکزی مشتبہ ملزم بھی شامل ہے۔‘‘

DW.COM