1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

بھارتی ایئر شو میں جہاز حادثے کا شکار، دو پائلٹس ہلاک

جنوبی بھارتی شہر سکندر آباد میں ملکی بحریہ کا ایک ہوائی جہاز ایئرشو کے دوران گر کر تباہ ہوگیا ہے، جس کے نتیجے میں دو پائلٹس ہلاک جبکہ چار دیگر شدید زخمی ہوگئے ہیں۔

default

یہ ایئر کرافٹ ایک رہائشی علاقے میں گر کر تباہ ہوگیا

Indien Flugschau

پانچ روزہ ایئر شو کو دیکھنے کے لئے دنیا کے تقریباً سترہ ملکوں سے پانچ سو مندوبین کی شرکت متوقع تھی

یہ واقعہ ریاست آندھرا پردیش کے دارالحکومت حیدر آباد کے قریب ہی واقع شہر سکندر آباد میں بدھ کے روز پیش پیش آیا۔ حیدر آباد میں مقیم ٹیلی وژن صحافی فرزان احمد نے ڈوئچے ویلے اردو سروس کو بتایا کہ ہوائی جہاز کے حادثے میں پائلٹ اور شریک پائلٹ ہلاک جبکہ پانچ شہری زخمی ہوگئے۔’’بھارتی نیوی کا یہ ایئر کرافٹ سکندرآباد کے علاقے بیگم پیٹ میں ایک رہائشی مکان پر گر کر تباہ ہوگیا۔‘‘

بھارتی حکام کے مطابق اس حادثے میں جہاز کا پائلٹ اور شریک پائلٹ زندہ نہیں بچے۔ یہ حادثہ پانچ روزہ ’ایوئیشن 2010ء ایکسپوزیشن‘ کے پہلے ہی روز پیش آیا۔

خبر رساں ادارے ’انڈو ایشین نیوز سروس‘ نے بھارتی بحریہ کے سربراہ ایڈمیرل نرمل وَرما کا حوالہ دیتے ہوئے لکھا ہے کہ دونوں پائلٹس زندہ نہیں بچے کیونکہ شاید وہ شہریوں کو بچانا چاہتے تھے یا پھر ان کے پاس اتنا وقت ہی نہیں تھا کہ وہ جہاز سے صحیح سلامت باہر نکل سکتے۔

Indien Flugzeugabsturz

یہ حادثہ پانچ روزہ ’ایوئیشن 2010ء ایکسپوزیشن‘ کے پہلے ہی روز پیش آیا

حیدر آباد کے پولیس کمشنر اے کے خان نے اس حادثے میں چار افراد کے زخمی ہونے کی تصدیق کی۔ کمشنر خان کے مطابق یہ جہاز سکندرآباد کے ہوائی اڈے کے قریب ایک رہائشی علاقے میں دو منزلہ عمارت سے جا ٹکرایا۔ تمام زخمیوں کو انتہائی نازک حالت میں ہسپتال میں داخل کیا گیا ہے۔ بھارتی ٹیلی وژن چینلز پر اس حادثے کے نتیجے میں مچی تباہی کے مناظر دکھائے جا رہے ہیں۔

حادثے کا شکار ہونے والے ’کرن ایم کے۔ ٹو‘ نامی اس جہاز کو ’ہندوستان ایرو ناٹکس لمیٹڈ‘ نے تیار کیا تھا۔

Indien Flugzeugabsturz

حیدر آباد ایئر شو کا ایک منظر

اطلاعات کے مطابق ایئر شو کے بالکل آخری لمحات میں پائلٹ جہاز پر اپنا کنٹرول سنبھالنے میں ناکام رہا تاہم تحقیقات مکمل ہونے کے بعد ہی اس حادثے کی اصل وجوہات کا پتہ چل سکے گا۔

ایئر شو کی تقریب کے دوران بھارت کے وفاقی وزیر برائے شہری ہوا بازی یا سول ایوئیشن پرفُل پٹیل اور امریکی سفیر ٹموتھی روئمر سمیت دیگر اہم شخصیات حیدرآباد میں موجود تھیں۔

یہ حادثہ پانچ روزہ ’ایوئیشن 2010ء ایکسپوزیشن‘ کے پہلے ہی روز پیش آیااس ایکسپوزیشن میں فرانس ساتھی ملک ہے جبکہ پانچ روزہ ایئر شو کو دیکھنے کے لئے دنیا کے تقریباً سترہ ملکوں سے پانچ سو مندوبین کی شرکت متوقع تھی۔

رپورٹ: گوہر نذیر گیلانی

ادارت: کشور مصطفیٰ

DW.COM

Audios and videos on the topic