1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

بنگلور کے بعد احمد آباد میں دھماکے: انتیس ہلاک، سو زخمی

بھارت کی سلی کان ویلی بنگلور میں نو سلسلہ وار بم دھماکوں کے محض ایک روز بعد، ہفتہ کی شام ریاست گجرات میں سترہ دھماکے ہوئے، جن میں پولیس حکام کے مطابق کم از کم انتیس افراد ہلاک اور ایک سو سے زائد زخمی ہوگئے ہیں۔

default

پولیس اور بم سکواڑ کے اہلکار بنگلور میں ہونے والے سلسلہ وار دھماکوں کے بعد جائے وقوعہ کا جائزہ لیتے ہوئے

حکام کے مطابق دھماکے سائکلوں میں نصب کئے گئے تھے اور یہ ستر منٹوں کے وقفے میں یکے بعد دیگرے زوردار دھماکوں سے پھٹ گئے۔ احمد آباد کے مختلف شہروں میں ہونے والے ان دھماکوں کے نتیجے میں عوام میں خوف کی لہر دوڑ گئی ہے۔ تمام سترہ دھماکے بھارت کے معیاری وقت ساڑھے چھہ اور ساڑھے سات کے درمیان ہوئے۔ جن شہروں میں یہ دھماکے ہوئے ان میں باپو نگر، جواہر نگر، مانی نگر، ایسان پور اور ہکسر شامل ہیں۔

Shivraj Patil Innenminister in Indien 2004

بھارت کے مرکزی وزیر برائے داخلی امور شیو راج پاٹل اخبار نمائندوں سے بات کرتے ہوئے

بھارتی وزیر داخلہ شیو راج پاٹل نے احمد آباد دھماکوں کی شدید الفاظ میں مزمت کرتے ہوئے کہا کہ مرکزی حکومت ملوث افراد کو پکڑنے کے لئے ریاستی حکومت کی بھرپور مدد کرے گی۔

دھماکوں کے بعد پورے گجرات میں سیکورٹی کو ہائی الرٹ کردیا گیا ہے جبکہ اس کے ساتھ ساتھ ملک کے دوسرے بڑے شہروں میں سیکورٹی اداروں کو چوکنا کردیا گیا ہے۔