1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

کھیل

بنڈس لیگا: دفاعی چیمپیئن میونخ کا شاندار آغاز

جرمن قومی فٹ بال لیگ کے پہلے میچ ڈے کے زیادہ تر میچ مکمل ہوگئے ہیں۔ دفاعی چیمپیئن میونخ کلب نے اپنے اعزاز کا شاندار دفاع کرتے ہوئے پہلے میچ میں کامیابی حاصل کی ہے۔

default

بریمن اور ہوفن ہائیم کے میچ کا منظر

بنڈس لیگا کے پہلے میچ ڈے کی شروعات توجمعہ سے ہو چکی ہے۔ جمعہ کو ایک میچ کھیلا گیا جبکہ ہفتہ کے روز چھ میچ شیڈیول تھے۔ ان میں سب سے دلچسپ مقابلہ ہوفن ہائم اور بریمن کے درمیان تھا۔ بریمن کی مضبوط ٹیم کو ہوفن ہائم سے ایک کے مقابلے میں چار گول سے ہارنا پڑا۔ ہوفن ہائم کی ٹیم سن 2008 ء میں پہلے حصے کی چیمپیئن تھی اور بعد میں وہ مکمل چیمپیئن شپ جیتنے میں ناکام رہی تھی۔

گزشتہ سال اس ٹیم کی کارکردگی غیر متاثر کن رہی تھی۔ اس کی وجہ یہ رہی کہ اس کے مایہ ناز کھلاڑی پوری طرح فٹ نہیں تھے۔ بہر حال گزشتہ روز کے میچ کو دیکھ کر ایسا دکھائی دیتا ہے کہ ہوفن ہائم کے کھلاڑی فٹنس کے مسائل سے باہر نکل آئے ہیں۔

ہفتہ کے روز مؤنشن گلاڈ باخ اور نیورینبرگ کے درمیان میچ ایک ایک گول سے برابر رہا۔ دونوں گول کھیل کے پہلے ہاف میں ہوئے تھے۔کولون کی ٹیم کوکائزرزلاؤٹرن سے ایک کے مقابلے میں تین گول سے ہارنا پڑا۔

Flash-Galerie Bundesliga 1. Spieltag

ہیمبرگ نے شالکے کو دو ایک سے شکست دی

کائزرزلاؤٹرن کی ٹیم درجہ دوم سے کوالیفائی کر کے لیگ کے پہلے مرحلے میں کھیل رہی ہے۔ اسی طرح ایک اور کوالیفائی کرنے والی ٹیم سینٹ پاؤلی نے بھی اپنے پہلے میچ میں کامیابی حاصل کی ہے۔ اس نے فرائی بُرگ کو ایک کے مقابلے میں تین گول سے ہرایا۔ ہنوور کلب کو فرینکفرٹ کے کلب پر فتح حاصل ہوئی۔

گزشتہ سال دوسرے مقام پر رہنے والی ٹیم شالکے کو ہیمبرگ سے دو ایک ہارنا پڑا۔ یہ میچ وقفے پربغیر گول کے برابر تھا۔ دوسرے ہاف میں نتیجہ خیز گول ہوئے۔ اس طرح فیلکس ماگاتھ کی ٹیم نے رواں سال مناسب انداز میں اپنے کھیل کی شروعات نہیں کی ہے۔

پہلے دن میونخ نے وولفس برگ کو ایک کے مقابلے میں دو گول سے شکست دی۔ وولفس برگ کی ٹیم سن 2008 میں قومی چیمپیئن شپ جیتنے میں کامیاب رہی تھی۔ البتہ گزشتہ سال وہ اپنے اعزاز کا دفاع کرنے سے قاصر رہی۔ میونخ کی ٹیم سن 2009 میں ایک بار پھر چیمپیئن بننے میں کامیاب ہوئی تھی۔

رپورٹ: عدنان اسحاق

ادارت: عابد حسین

DW.COM

ویب لنکس