1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

برلن: ایک ٹرک نے ایک کرسمس مارکیٹ روند ڈالی، نو افراد ہلاک

جرمن دارالحکومت برلن میں پیر اُنیس دسمبر کی شام ایک ٹرک نے ایک کرسمس مارکیٹ روند ڈالی۔ اس واقعے میں کم از کم نو افراد ہلاک اور پچاس زخمی ہو گئے۔

پولیس نے وسطی برلن کی بُوڈا پیسٹر سٹریٹ اور اُس کے نواحی علاقے کو گھیرے میں لے لیا ہے اور ابتدائی تحقیقات شروع کر دی ہیں۔ سرِ دست یہ بات واضح نہیں ہے کہ آیا یہ باقاعدہ منصوبہ بندی کے ساتھ کی جانے والی کوئی دہشت گردانہ کارروائی تھی، کوئی حادثہ تھا یا حملہ آور کے کچھ اور محرکات تھے۔

بتایا گیا ہے کہ برلن کے مرکزی علاقے میں واقع قیصر ولہیلم یادگاری چرچ کے قریب ایک بڑے ٹرک نے، جس پر کسی مشرقی یورپی ملک کی نمبر پلیٹ تھی، کرسمس مارکیٹ میں لگائے گئے متعدد اسٹالز کو روند ڈالا۔

اس واقعے کے فوراً بعد بتایا گیا کہ ڈرائیور ٹرک سے نکل کر فرار ہو گیا ہے۔ تازہ خبروں کے مطابق جائے واقعہ کے قریب ہی ایک مشتبہ شخص کو گرفتار کر لیا گیا ہے اور اس بات کا قوی امکان ہے کہ گرفتار کیا جانے والا شخص ہی اس ٹرک کا ڈرائیور ہے۔

ڈرائیور کے ساتھ والی نشست پر موجود شخص اس واقعے کے دوران ہلاک ہو گیا ہے۔ اُس کی موت کن عوامل کا نتیجہ تھی، اس حوالے سے بھی تحقیقات کا سلسلہ جاری ہے۔ ابھی پولیس کی جانب سے باقاعدہ کوئی بیان جاری نہیں کیا گیا ہے تاہم عوام سے اپنے گھروں میں رہنے، پُر سکون رہنے اور قیاس آرائیوں سے گریز کرنے کے لیے کہا ہے۔

پولیس اور فائر بریگیڈ کی متعدد گاڑیاں موقع پر پہنچ گئی ہیں۔