1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

باغیوں کا حملہ، تین بھارتی فوجی اور ایک خاتون

بھارتی زیر انتظام کشمیر میں باغیوں کی طرف سے کیے جانے والے ایک حملے میں تین بھارتی فوجی اور ایک خاتون مارے گئے ہیں۔ پولیس کے مطابق باغیوں نے فوجیوں کے ایک قافلے کو نشانہ بنایا۔

سری نگر پولیس کے انسپکٹر جنرل سید جاوید مجتبیٰ گیلانی کے مطابق عسکریت پسندوں نے آج جمعرات 23 فروی کو علی الصبح شوپیاں کے علاقے میں بھارتی فوجیوں کے ایک گروپ پر ہینڈ گرینڈز سے حملہ کر دیا اور فائرنگ بھی کی۔ یہ فوجی ایک سرچ آپریشن کے بعد واپس لوٹ رہے تھے۔

خبر رساں ادارے ایسوسی ایٹڈ پریس کے مطابق گیلانی کا کہنا تھا کہ حملے کے نتیجے میں دونوں اطراف سے فائرنگ کا تبادلہ شروع ہو گیا اور ایک گولی قریبی گھر میں سوئی ہوئی ایک 60 سالہ خاتون کو جا لگی جو اس کی موت کا سبب بنی۔ اس حملے میں بھارتی فوج کے تین دیگر فوجی زخمی بھی ہوئے جن میں دو افسران بھی شامل ہیں۔

Pakistan Kashmir Proteste in Srinagar (picture-alliance/ZUMA Press/J. Dar)

ہلاک ہونے والی خاتون کے جنازے میں شریک ہزاروں افراد نے بھارتی حکومت کے خلاف اور باغیوں کے حق میں نعرے بازی

ایسوسی ایٹڈ پریس کے مطابق آزاد ذرائع سے اس واقعے کی تصدیق نہیں ہو سکی۔ تاہم مقامی افراد کا کہنا تھا کہ فائرنگ کا سلسلہ رُکنے کے تھوڑی ہی دیر بعد فوجیوں نے اس علاقے کے گھروں میں توڑ پھوڑ شروع کر دی اور درجنوں کاروں کو نقصان پہنچایا۔

ایک مقامی شخص راشد احمد کے مطابق بھارتی فوجی گھروں میں زبردستی گھُس گئے اور یہاں تک کہ کمروں کے اندر فائرنگ کی۔ سوشل میڈیا پر جاری ہونے والی ایک ویڈیو میں دیکھا جا سکتا ہے کہ کاروں کے شیشے اور گھروں کی کھڑکیاں ٹوٹی ہوئی ہیں۔ ایسوسی ایٹڈ پریس کے مطابق بھارتی فوج اور پولیس کی طرف سے ان الزامات کا فوری طور پر کوئی جواب نہیں دیا گیا۔

Indien Kaschmir Poilzeigewalt Srinagar (Getty Images/AFP/R. Conway)

بھارتی زیرانتظام کشمیر میں علیحدگی پسند 1989ء سے بھارت سے علیحدگی کے لیے لڑ رہے ہیں

دریں اثناء فائرنگ کے دوران ہلاک ہونے والی خاتون کے جنازے میں شریک ہزاروں افراد نے بھارتی حکومت کے خلاف اور باغیوں کے حق میں نعرے بازی۔

ایسوسی ایٹڈ پریس کے مطابق بھارتی زیرانتظام کشمیر میں علیحدگی پسند 1989ء سے بھارت سے علیحدگی کے لیے لڑ رہے ہیں۔ اس دوران باغیوں کے حملوں اور بھارتی فوج کی کارروائیوں کے نتیجے میں 68 ہزار سے زائد افراد ہلاک ہو چکے ہیں، جن میں سے اکثریت عام کشمیریوں کی ہے۔