1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

کھیل

بارسلونا میں یورپی لائٹ ایتھلیٹکس چیمپئن شپ

سپین کے شہر بارسلونا میں لائٹ ایتھلیٹکس کی یورپی چیمپئن شپ 27 جولائی کو شروع ہوئی تھی اور یکم اگست کو اپنے اختتام کو پہنچ جائے گی۔ اب تک کی کارکردگی میں روسی کھلاڑی سب سے آگے ہیں۔

default

سِلکے شپیگل برگ

روسی ایتھلیٹس نے اب تک مجموعی طور پر اُنیس تمغے حاصل کئے ہیں، جن میں سونے کے آٹھ اور چاندی کے پانچ تمغے شامل ہیں۔ سونے کے چار اور مجموعی طور پر دَس تمغوں کے ساتھ فرانس دوسرے جبکہ سونے کے تین اور مجموعی طور پر گیارہ تمغوں کے ساتھ برطانیہ اب تک کے مقابلوں میں سرِ فہرست ہے۔ ہفتہ اکتیس جولائی اِس چیمپئن شپ کا پانچواں دن ہے۔

تمغوں کی فہرست میں چوتھے نمبر پر جرمن کھلاڑی ہیں، جنہوں نے اب تک مجموعی طور پر سات تمغے جیتے ہیں۔ اِن میں سونے اور چاندی کے تین تین اور کانسی کا ایک تمغہ شامل ہے۔

جرمنی کی اِس کارکردگی میں نمایاں حصہ خواتین کھلاڑیوں کا ہے۔ ایک سو میٹر کی دوڑ میں ویرینا سیلر نے پہلی پوزیشن حاصل کرتے ہوئے جبکہ نیزہ بازی میں لِنڈا شٹاہل نے پہلی پوزیشن حاصل کرتے ہوئے سونے کے تمغے جیتے۔

Verena Sailer und Linda Stahl Gewinnerinnen EM 2010

ویرینا سیلر اور لِنڈا شٹاہل

خواتین کی نیزہ بازی میں چاندی کا تمغہ بھی جرمنی ہی کی کرسٹیانا اوبرگ فوئل کے حصے میں آیا۔ ہیمر تھرو میں بیٹی ہائیڈلر اول آتے ہوئے سونے کے تمغے کی حقدار ٹھہریں۔

خواتین کے پول والٹ مقابلوں میں بھی جرمن خواتین کا پلہ بھاری رہا۔ چاندی کا تمغہ سِلکے شپیگل برگ نے جبکہ کانسی کا تمغہ لیزا رائزی نے جیتا۔ اب تک جرمنی کے لئے تمغہ جیتنے والے واحد مرد کھلاڑی برلن سے تعلق رکھنے والے کارسٹن شلانگن ہیں، جنہوں نے 1,500 میٹر کی دوڑ میں دوسری پوزیشن حاصل کرتے ہوئے چاندی کا تمغہ حاصل کیا۔

اِس یورپی چیمپئن شپ میں ہونے والے مقابلوں کی مجموعی تعداد سینتالیس ہے۔ صرف آج ہفتے کے روز ہی اِن میں سے بائیس مقابلے منعقد ہو رہے ہیں۔ آج ڈِسکس تھرو کے جرمنی سے تعلق رکھنے والے عالمی چیمپئن رابرٹ ہارٹنگ اپنے شعبے میں سونے کا تمغہ جیتنے کی اُمید کر رہے ہیں۔ پچیس سالہ ہارٹنگ کو پورا یقین ہے کہ وہ ستر میٹر دور ڈسکس پھینک سکیں گے۔

رپورٹ: امجد علی

ادارت: ندیم گِل

DW.COM

ویب لنکس