1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

کھیل

بائرن میونخ نے لوئس فان گال کو ہٹا دیا

ریکارڈ مرتبہ جرمن قومی فٹ بال لیگ بنڈس لیگا جیتنے والے کلب بائرن میونخ نے اپنے کوچ لوئس فان گال کو فارغ کر دیا ہے۔ فان گال کے ہٹائے جانے کی خبریں کئی ہفتوں سے جرمن ذرائع ابلاغ میں گردش کر رہی تھیں۔

default

اخبار زوڈ ڈوئچے زائٹنگ، بلڈ اور ککر کی رپورٹس کے مطابق ہالینڈ سے تعلق رکھنے والے لوئس فان گال کو ان کے عہدے سے ہٹا دیا گیا ہے۔گزشتہ برس ہی جرمنی میں لوئس فان گال کو بہترین کوچ قرار دیا گیا تھا۔ تاہم اس اعزاز کے بعد ان کے کلب بائرن میونخ کی کارکردگی ویسی نہ رہی جیسی کے توقع کی جا رہی تھی۔ یہی وجہ تھی کہ جرمن ذرائع ابلاغ فان گال کو خاص اہمیت دے رہے تھے۔ ابھی چند دن قبل تو لوئس فان گال کو رخصت کر نے کی خبریں بہت ہی وثوق کے ساتھ شائع ہوئیں تاہم چند ہی لمحوں بعد بائرن میونخ کلب کی انتظامیہ نے ان کی تردید کر دی تھی۔

بنڈس لیگا کے حالیہ سیزن میں بھی گال کی ٹیم ابھی تک متاثر کارکردگی دکھانے میں کامیاب نہیں ہو سکی ہے۔

Symbolbild Louis van Gaal Bayern München

لوئس فان گال کو گزشتہ برس جرمنی کا بہترین کوچ قرار دیا گیا تھا

گزشتہ روز نیورمبرگ کے خلاف میچ ایک ایک گول سے برابر رہنےکے بعد کلب کی انتظامیہ کے صبر کا پیمانہ لبریز ہو گیا اور لوئس فان گال سے ٹیم کی کوچنگ کے فرائض واپس لے لیے گئے۔

بائرن میونخ نہ صرف ریکارڈ چیمپئن ہے بلکہ جرمنی کا سب سے بڑا فٹ بال کلب بھی ہے۔ ہفتے کے روز کھیلے جانے والا میچ برابر رہنے کی وجہ سے خدشہ پیدا ہوگیا ہے کہ شاید بائرن میونخ چیمپئز لیگ کا اگلا سیزن نہ کھیل سکے۔ چیمپئنز لیگ میں وہی کلب شامل ہوتے ہیں جنہوں نے اپنے ملکوں میں پہلی دوسری یا تیسری پوزیشن حاصل کر رکھی ہو۔ بنڈس لیگا کے پوائنٹس ٹیبل پر اب بائرن میونخ چوتھی پوزیشن پر ہے جبکہ تیسری ہنوور کے پاس آ گئی ہے۔

لوئس فان گال کی جانب سے ابھی تک کوئی ردعمل سامنے نہیں آیا ہے۔ وہ 2009/10 میں بائرن میونخ کے کوچ بننے تھے۔ فوراً ہی انہوں نے اپنی صلاحیتوں کا لوہا منوا لیا تھا۔ ان کا کلب جرمن فٹ بال لیگ کا چیمپئن بنا اور چیمپئنز لیگ کے فائنل میں بھی پہنچا۔ ان کی کارکردگی کو دیکھتے ہوئے کلب انتظامیہ نےگزشتہ ستمبر میں ان کے معاہدے میں 2011/12 تک کی توسیع کر دی تھی۔ اگلی مرتبہ چیمپئنز لیگ کا فائنل میونخ میں منعقد ہوگا اور یہ انتہائی افسوس کی بات ہو گی کہ اگر بائرن میونخ اس چیمپئن شپ میں کوالیفائی تک بھی نہ کر سکے۔

رپورٹ: عدنان اسحاق

ادارت: شامل شمس

DW.COM

ویب لنکس