1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

کھیل

ایشین گیمز میں پاکستان کی کارکردگی

ایشین گیمز میں پاکستان کا واحد طلائی تمغہ ندا راشد کی آل راؤنڈ کاکردگی کا مرہون منت رہا جبکہ اب تک پاکستانی کھلاڑیوں نے مجوعی طور پر چار میڈل اپنے نام کئے ہیں۔

default

ایشین گیمز: کرکٹ مقابلے

گوجرانوالہ سے تعلق رکھنے والی 23 سالہ ندا راشد نے بنگلہ دیش کے خلاف ویمن کرکٹ کے فائنل میں نصف سنچری بنانے سے پہلے تین وکٹیں لیکر پاکستانی خواتین سپورٹس کی نئی تاریخ رقم کی۔

مین آف دی ٹورنامنٹ کا اعزاز حاصل کرنے کے بعد ندا نے اپنے آبائی شہر پہنچ کر ریڈیو ڈوئچے ویلے کو بتایا کہ یہ کامیابی پاکستانی خواتین ایتھلیٹس کے لئے ایک سنگ میل کی حیثیت رکھتی ہے۔ انہوں نے کہا،’ ہم نے اتنا بڑا کارنامہ انجام دے کر ثابت کر دیا ہے کہ پاکستانی خواتین بھی کسی سے کم نہیں کیونکہ ہمیشہ ہم سے کوئی توقع نہیں رکھی جاتی مگر اب دوسرے کھیلوں میں بھی خواتین کھلاڑیوں کی حوصلہ افزائی کی جائے گی۔‘

پنجاب یونیورسٹی لاہور میں زیر تعلیم ایم ایس سی کی طالبہ ندا راشد نے بتایا کہ تعلیم کے ساتھ کھیل میں کامیابی پاکستانی ٹیم کے کوچزاورساتھی کھلاڑیوں کی معاونت کا نتیجہ ہے۔

Kricket Bangladesch - Sri Lanka Cricket

پاکستانی خواتین کی کرکٹ ٹیم نے بنگلہ دیش کو شکست دی

پاکستان خواتین کرکٹرز نے فائنل میں بنگلہ دیش کو ہرانے سے پہلے تھائی لینڈ، چین اور جاپان کو باآسانی زیر کیا تھا۔ پاکستان خواتین کرکٹ ٹیم کی کپتان ثناء میر سے جب کامیابی کا راز دریافت کیا گیا تو ان کا کہنا تھا کہ تمام کھلاڑیوں نے اپنی ذات سے ماوراء ہو کر کھیل پیش کیا۔ ثناء میر کا کہنا تھا پاکستانی ٹیم کو اگر زیادہ بین الاقوامی میچز کھیلنے کا موقع ملے تو یہ ٹیم اگلے چند برس میں دنیا کے چارصف اول کی ٹیموں میں آسکتی ہے۔

پیر کے روز پاکستان کی مردوں کی کرکٹ ٹیم نے بھی میزبان چین کو 128 رنز سے ہرا کر سیمی فائنل میں جگہ بنا لی۔ کپتان خالد لطیف کی شاندار سینچری سے تقویت پاکر پاکستانی نے مقررہ 20 اوورز میں 183 رنز اسکور کئے جس کے جواب میں چین کی ٹیم 55 رنز ہی بنا سکی۔

سکواش میں پاکستان کی کارکردگی

سکواش میں پاکستان کےعامر اطلس خان نے سیمی فائنل میں دفاعی چمپیئن ملائیشیا کے بینگ ہی کو شکست دے کر سنسنی پھیلائی مگر فائنل میں ان کی ملائیشیا کے ہی اذلان سکندر کے ہاتھوں شکست نے 12 برس بعد پاکستان کے گولڈ میڈل جیتنے کے امکان کو ختم کر دیا۔ واضح رہے کہ ایشین گیمز میں سلور میڈل جیتنے والے 20 سالہ عامر اطلس خان سابق عالمی چمپیئن جان شیر خان کے بھانجے ہیں۔

Commonwealth Games 2010 Indien Pakistan

بھارت سے شکست کے بعد اب پاکستان کو جنوبی کوریا کے خؒاف اپنا میچ جیتنا ہوگا

ہاکی سے وابستہ امیدیں

ہاکی میں بھارت کے خلاف گروپ میچ کی ناکامی نے پاکستان کو پہلا سیمی فائنل دفاعی چمپیئن جنوبی کوریا کے خلاف کھیلنے پر مجبور کر دیا ہے۔ بھارت کے ہاتھوں شکست کے بعد پاکستان اور جنوبی کوریا کی ہاکی ٹیموں کے درمیان منگل کو ہونے والے پہلے سیمی فائنل کی بابت سابق اولمپین اور70 کے عشرے میں پاکستان کو متواتر تین ایشین گیمز گولڈ جتوانے والے شہناز شیخ کہتے ہیں، ’پاکستان کو فتح کے لئے جارحانہ حکمت عملی کی ضرورت ہو گی۔‘ انہوں نے کہا کہ جنوبی کوریا کے خلاف سیمی فائنل ہی دراصل پاکستان کے لئے فائنل ہے۔

ووشو میں چاندی کا تمغہ

چائنا گیمزمیں پاکستانی دستے کےلئے سب سے خواشگوار حیرت کا باعث اعجاز احمد کا ووشو کے 75 کلوگرام ایونٹ میں چاندی کا تمغہ بنا۔ 29 سالہ اعجاز احمد نے منگولیا اور ترکمانستان سے تعلق رکھنے والے اپنے حریفوں کو شکست دے کر ملکی مارشل آرٹس کھیلوں کی نئی تاریخ رقم کی۔

باکسنگ میں ناکامی

مایوس کن کارکردگی کے بعد پاکستان کے تمام سات باکسرز ایشین گیمز سے خالی ہاتھ لوٹ رہے ہیں۔ ایونٹ میں عامرخان اور ارشد حسین کے علاوہ کامن ویلتھ کے برانز میڈلسٹ محمد وسیم دوسرے راؤنڈ میں ہی ہمت ہار گئے تھے۔

Aisam-Ul-Haq Qureshi Tennis Pakistan

اعصام الحق ایشین گیمز میں شرکت نہیں کر رہے ہیں

ٹینس مقابلے

ٹینس میں بھی اعصام الحق کے آخری موقع پر کھیلوں میں شرکت سے انکار کے بعد عقیل خان بھی دوسرے راؤنڈ سے آگے نہ بڑھ سکے۔

ایشین گیمز کے گیارویں روز کے اختتام پر پاکستانی دستہ چار میڈلز کے ساتھ تمغوں کی دوڑ میں سترویں نمبر پر ہے اور آنے والے دنوں میں اسکے ہاکی، کرکٹ اور پہلوانی میں میدان مارنے کا قوی امکان ہے۔

رپورٹ: طارق سعید، کراچی

ادارت: عاطف بلوچ

DW.COM