1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

معاشرہ

ایسٹر کا تہوار: پاپائے روم کا پیغامِ امن

دنیا بھر میں اتوار کے روز منائے جانے والے ایسٹر کے مسیحی تہوار کے موقع پر اہم ترین مذہبی تقریبات مشرق وسطیٰ میں یروشلم اورکیتھولک عیسائی عقیدے کے مرکز ویٹی کن میں منعقد ہوئیں۔

default

"دنیا کو ہر حوالے سے امن کا گہوارہ بنانے کی ضرورت ہے"

مسیحی عقیدے کی رو سے حضرت عیسیٰ کو گڈ فرائیڈے کے روز مصلوب کیا گیا تھا اور اس کے تیسرے روز یعنی ایسٹر سنڈے کے دن یروشلم میں ان کی resurrection یا قبر سے دوبارہ زندہ اٹھنے کا معجزہ رونما ہوا تھا۔

اسی مناسبت سے عیسائی عقیدے کے پیروکاروں کے لئے ایسٹر بھی کرسمس کی طرح انتہائی اہم مذہبی تہوار ہے۔ اتوار کے روز اسی تہوار کے موقع پر اہم ترین تقریبات یروشلم اور کیتھولک مسیحی عقیدے کے مرکز ویٹی کن میں منعقد ہوئیں۔

یروشلم میں مسیحی عقیدے کی تاریخ میں انتہائی اہمیت کے حامل مرکزی کلیساؤں میں منعقد ہونے والی خصوصی مذہبی تقریبات میں ہزاروں افراد نے حصہ لیا۔

Papst Benedikt XVI. in der Osternacht

اسی طرح اٹلی میں ویٹی کن کے سینٹ پیٹر سکوائر میں ایسٹر کے موقع پر کیتھولک عیسائیوں کے پیشوا اور پاپائے روم بینیڈکٹ شانزدہم نے وسیع تر علاقے پر پھیلے ہوئے ہزارہا زائرین کے مجمعے سے Urbi et Obri یا "شہر اور دنیا" کے نام سے اپنا وہ روایتی خطاب کیا جس میں انہوں نے پوری دنیا کے عیسائیوں کو ایسٹر کی مبارکباد بھی دی۔

پاپائے روم نے کہا کہ دنیا کو ہر حوالے سے امن کا گہوارہ بنانے کی ضرورت ہے اور سماجی ترقی کے عمل میں تمام براعظموں کے تمام ملکوں کے سبھی انسانوں کو برابر مواقع ملنا چاہیئں۔

پوپ بینیڈکٹ شانزدہم نے اپنے خطاب میں کہا کہ پسماندگی، بدامنی اور خانہ جنگیوں جیسے مسائل کے شکار براعظم افریقہ اور مشرق وسطیٰ جیسے خطوں میں امن قائم ہونا چاہیئے اور ان کوششوں میں حضرت عیسیٰ کا امن کا پیغام بہت مدد گار ثابت ہو سکتا ہے۔

Armut in Afrika

پوپ نے اپنےخطاب میں افریقہ کو خاص طور پر موضوع بنایا

کلیسائے روم کے سربراہ نے اس حقیقت پر خاص طور پر افسوس کا اظہار کیا کہ افریقہ طویل اور خونریز تنازعات کی زد میں ہے اور مشرق وسطیٰ میں قیام امن کی منزل ابھی بھی حاصل نہیں کی جاسکی۔

پوپ نے کہا کہ مصالحت کے ذریعے مفاہمت وہ واحد راستہ ہے جس پر چلتے ہوئے سلامتی اور پرامن بقائے باہمی سے عبارت مستقبل کا حصول ممکن ہے۔

اپنے خطاب کے بعد پاپائے روم نے دنیا بھر کے مسیحی باشندوں کو 63 مختلف زبانوں میں ایسٹر کی مبارکباد دی۔