1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

ایرانی ڈرون مار گرایا ہے، پاکستانی وزارت خارجہ

پاکستان نے بغیر پائلٹ پرواز کرنے والے ایک ایرانی ڈرون طیارے کو اپنے جنوب مغربی صوبہ بلوچستان میں اپنی حدود کے اندر مار گرایا ہے۔ یہ بات پاکستانی وزارت خارجہ کی طرف سے بتائی گئی ہے۔

خبر رساں ادارے اے ایف پی نے پاکستانی وزارت خارجہ کی طرف سے جاری ہونے والے ایک بیان کے حوالے سے کہا ہے کہ اس ڈرون نے پیر کے روز پاکستانی سرحد عبور کی، ’’پاکستان ایئرفورس نے اس ڈرون کو مار گرایا کیونکہ یہ نامعلوم ڈرون پاکستانی حدود کے تین سے چار کلومیٹر اندر پرواز کر رہا تھا۔‘‘ وزارت خارجہ کے مطابق پاکستان نے تہران حکومت کو اس واقعے کے بارے میں آگاہ کر دیا ہے۔

اے ایف پی کے مطابق ایرانی صوبہ سیستان بلوچستان جس کی سرحد پاکستان اور افغانستان کے ساتھ لگتی ہے، حالیہ مہینوں کے دوران ایرانی فورسز اور سُنی عسکریت پسندوں کے درمیان مسلح جھڑپوں کا مرکز رہا ہے۔

تہران نے رواں برس اپریل نے پاکستان سے اس بات پر احتجاج بھی کیا تھا کہ مسلح عسکریت پسندوں نے سرحد پار کر کے 10 ایرانی سرحدی گارڈز کو ہلاک کر دیا تھا۔

سیستان بلوچستان میں سکیورٹی ایجنسیوں کی اکثر منشیات کے اسمگلرز کے ساتھ بھی جھڑپیں ہوتی ہیں۔ یہ صوبہ اس راستے پر ہے جسے ہیروئن اور چرس کی افغانستان اور پاکستان سے یورپ، مشرق وُسطیٰ اور افریقہ کی طرف اسمگلنگ کا ایک بڑا روٹ قرار دیا جاتا ہے۔