1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

امریکا ایران کا اوّلین دشمن ہے، ایرانی سپریم لیڈر خامنائی

ایران کے سپریم لیڈر آیت اللہ خامنائی نے کہا ہے کہ امریکا ایران کا اوّلین دشمن ہے اور ایران جوہری معاہدے پر امریکا کے دباؤ کے سامنے کبھی ہتھیار نہیں ڈالے گا۔

یہ بیان ایرانی سپریم لیڈر نے آج بروز جمعرات ٹیلیویژن پر ایک تقریر میں دیا۔ امریکی صدر ٹرمپ نے گزشتہ ماہ ایران کے ساتھ کیے گئے جوہری معاہدے سے منہ پھیرتے ہوئے اس کی توثیق کرنے سے انکار کر دیا تھا۔ اس نیو کلیئر ڈیل کے تحت ایران پر عائد بیشتر پابندیاں اس شرط پر اٹھائی گئی تھیں کہ وہ اپنے جوہری پروگرام کو محدود کرے گا۔

خامنائی نے ایرانی ٹی وی پر اپنے خطاب میں مزید کہا،’’ امریکا کی دشمنی ایرانی قوم سے ہے۔ وہ ایران کا اولین دشمن ہے۔ ہم جوہری معاہدے پر امریکا کا دھمکی آمیز رویہ کبھی برداشت نہیں کریں گے۔‘‘

یہ جوہری معاہدہ سن دو ہزار پندرہ میں اٹھارہ ماہ کے طویل مذاکرات کے بعد طے پایا تھا۔ ایران کے ساتھ ان مشکل مذاکرات میں اُس وقت کی اوباما انتظامیہ کے ہمراہ برطانیہ، چین، فرانس، جرمنی، روس اور یورپی یونین شریک تھے۔ اس ڈیل کی اقوام متحدہ کی سکیورٹی کونسل نے متفقہ طور پر توثیق بھی کی تھی۔ جوہری معاہدے کے طے ہونے پر ایران پر عائد بعض پابندیوں کا خاتمہ ہو گیا تھا۔

ایران اور امریکا کے درمیان سفارتی تعلقات انقلاب ایران کے بعد سے تنزلی کا شکار ہیں جب سخت گیر موقف کے حامل ایرانی طلبا کے ایک گروپ نے  444 روز تک باون امریکیوں کو یرغمال بنائے رکھا تھا۔ 

DW.COM