1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

الاقصیٰ مسجد میں جھڑپیں نئے ’انتفادہ‘ میں تبدیل ہو سکتی ہیں، عباس

فلسطینی انتظامیہ کے صدر محمود عباس نے منگل کے روز خبردار کیا ہے کہ مسجد اقصیٰ کے احاطے میں فلسطینیوں اور اسرائیلی سکیورٹی فورسز کے درمیان جھڑپیں جاری رہیں، تو ’انتفادہ کا خطرہ‘ پیدا ہو سکتا ہے۔

محمود عباس نے یہ بات منگل کو فرانسیسی صدر فرانسوا اولانڈ سے ملاقات کے بعد پیرس میں کہی۔ انہوں نے اسرائیلی وزیراعظم نیتن یاہو سے مطالبہ کیا کہ وہ ’مقدس مقام پر کشیدگی بند‘ کریں۔ ان کا کہنا تھا، ’جو ہو رہا ہے، وہ انتہائی خطرناک ہے۔‘

انہوں نے کہا کہ وہ نہیں چاہتے کہ ایک بار پھر انتفادہ شروع ہو جائے۔ واضح رہے کہ انتفادہ فلسطینیوں کی وہ شدید احتجاجی تحریک تھی، جو پہلی بار سن 1987ء میں شروع ہوئی اور 1993 تک جاری رہی۔ دوسرا مرتبہ ایسا سن 2000ء میں ہوا تھا۔

نئے یہودی سال کے آغاز کے موقع پر الاقصیٰ مسجد کے احاطے میں فلسطینیوں اور اسرائیلی فورسز کے درمیان کئی روز تک جھڑپیں جاری رہیں اور اب بھی علاقے میں شدید کشیدگی پائی جاتی ہے۔

Frankreich Paris Francois Hollande und Mahmoud Abbas

عباس نے یہ بات صدر اولانڈ سے ملاقات کے بعد کہی

یہ بات اہم ہے کہ مسجد الاقصیٰ مسلمانوں کا تیسرا مقدس ترین مذہبی مقام ہے اور یہ یہودیوں کے مقدس ترین مقام ٹیپمل ماؤنٹ کے ساتھ ہی واقعہ ہے۔ مشرقی یروشلم میں واقع اس علاقے کو اسرائیل نے سن 1967 کی چھ روزہ جنگ کے دوران قبضے میں لے لیا تھا اور تب سے اس پر اسرائیل کا قبضہ ہے، تاہم مسجد الاقصیٰ کا انتظام و انصرام اسرائیل نے اردن کے سپرد کر رکھا ہے۔

مسلمانوں کو اس بات پر اعتراض ہے کہ اس مسجد کے احاطے میں یہودیوں کی تعداد مسلسل بڑھ رہی ہے اور اس سے اس احاطے کے انتظام سے متعلق قواعد تبدیل ہو سکتے ہیں۔ واضح رہے کہ یہودی اس احاطے کا دورہ تو کر سکتے ہیں، تاہم انہیں یہاں عبادت کی اجازت نہیں ہے، کیوں کہ اس سے مذہبی بنیادوں پر کشیدگی کا خطرہ ہوتا ہے۔ نیتن یاہو متعدد مرتبہ کہہ چکے ہیں کہ وہ اس احاطے سے متعلق قواعد تبدیل نہیں کریں گے۔

اسرائیلی حکام کو خدشات ہیں کہ اس بار حادثاتی طور پر مسلمانوں کی عیدالاضحیٰ اور یہودیوں کو مقدس دن یوم کیپور کا روزہ ایک ہی دن یعنی بدھ کے روز ہیں اور ایسے موقع پر یہ کشیدگی ایک بار پھر جھڑپوں میں تبدیل ہو سکتی ہے۔