1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

اقتصادی بحران: یورپی یونین کا ہنگامی اجلاس

عالمی اقتصادی بحران کے تناظر میں ستائیس ممالک پر مشتمل یورپی یونین کے سربراہانِ مملکت برسلز میں جمع ہو رہے ہیں۔

default

مالیاتی بحران سے فکرمند، یورپی ممالک کے سربراہ

مذکورہ اجلاس فرانسیسی صدر نکولا سارکوزی کے اس اعلان کے بعد ہنگامی طور پر طلب کیا گیا ہے جس میں انہوں نے فرانس کی کار ساز صنعت کی اس صورت میں مالی امداد کی یقین دہانی کروائی ہے کہ وہ اپنے ہاں ملازمتوں کو فرانس سے باہر منتقل نہیں کرے گی۔ فرانسیسی صدر کے اس اعلان سے یہ خدشہ پیدا ہوگیا ہے کہ یورپی ممالک تحفظاتی اقتصادی پالیسیوں پر عمل پیرا ہیں جس سے یورپی یونین کو بحیثیت ایک دھڑے کے نقصان پہنچ سکتا ہے۔

Frankreich EU Nicolas Sarkozy

فرانسسی صدر نکولا سارکوزی پر تحفظاتی اقتصادی پالیسیوں کو فروغ دینے کا الزام عائد کیا جا رہا ہے


مذکورہ اقتصادی اجلاس میں یورپی یونین کے وہ ممالک بھی شرکت کر رہے ہیں جو حالیہ عالمی اقتصادی بحران کی وجہ سے سخت مشکلات کا شکار ہیں۔ ان میں ہنگری اور لیٹویا جیسے ممالک بھی شامل ہیں جہاں اقتصادی بحران سیاسی عدم استحکام کی وجہ بھی بن رہا ہے۔ ان ممالک کا مطالبہ ہے کہ طاقتور یورپی ممالک تحفظاتی اقتصادی پالیسیوں کو یورپی یونین کے مجموعی مفاد میں ترک کریں۔

واضح رہے کے ہنگری نے یورپی یونین سے ایک سو اسّی بلین یوروز کی مالی مدد کی درخواست کی ہے تاہم اقتصادی ماہرین کے مطابق اس اجلاس میں شاید اس بارے میں کوئی فیصلہ نہ ہوسکے۔

EU-Gipfel 2005 EU-Flagge spiegelt sich in Glasfassade

یورپی یونین کا ہیڈ کارٹر برسلز میں واقع ہے


اجلاس سے قبل فرانس کے صدر نکولا سارکوزی نے تحفظاتی پالیسیوں کو فروغ دینے کے حوالے سے تنقید مسترد کردی ہے تاہم ان کا کہنا ہے کہ اگر امریکہ اپنی صنعتوں کو تحفظ دینے کے لیے اقدامات کرسکتا ہے تو یورپ کو بھی ایسا ہی کرنا چاہیے۔

یورپی کمیشن کے صدر غوزے مانیول باروسو کا کہنا ہے کہ مالیاتی بحران کا شکار اداروں کے لیے ریاستی بیل آؤٹ یورپی یونین کے آزاد تجارت سے متعلق معاہدوں کے خلاف نہیں جانا چاہیے۔

واضح رہے کے یہ اجلاس دو اپریل کو لندن امیں شروع ہونے والے جی بیس ممالک کے اہم اجلاس سے قبل عالمی اقتصادی بحران کے تدارک کے لیے دنیا کے مختلف حصّوں میں ہونے والے علاقائی اجلاسوں میں سے ایک ہے۔ ابھی حال ہی میں اسی نوعیت کا ایک اجلاس برلن میں بھی ہوا تھا۔