1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

افغان فوج کی تعداد میں اضافہ کیا جائے گا، کرزئی

میونخ کانفرنس کے آخری روز افغان صدر حامد کرزئی نے کانفرنس کے شرکاء سے خطاب کیا۔ کرزئی نے کہا کہ نیٹو فورسز افغان شہریوں کی ہلاکتوں کو روکنے کی کوشش کریں۔

default

کرزئی میونخ کانفرنس میں خطاب کے دوران

حامد کرزئی نے کہا کہ شہریوں کی ہلاکتوں سے حالات عسکریت پسندوں کے حق میں ہو جاتے ہیں۔ کرزئی نے اپنے خطاب میں افغان فوج کی تعداد تین لاکھ تک کرنے کے منصوبہ بھی پیش کیا۔ کرزئی کے مطابق 2012ء تک افغان فوج کی تعداد بڑھا دی جائے گی۔

Muenchener Sicherheitskonferenz

کرزئی کو جرمن وزیردفاع کانفرنس میں خوش آمدید کہتے ہوئے

کرزئی نے کہا کہ افغانستان کو اپنے ہاں سلامتی کی ذمہ داری خود اٹھانی چاہئے اور وہ عالمی برادری پر لمبے عرصے تک بوجھ نہیں بنے رہنا چاہتے۔ انہوں نے کہا کہ فوجیوں کی تعداد میں اضافے کا یہ مجوزہ منصوبہ 1992ء تک استعمال ہوتا رہا ہے۔

کرزئی کی جانب سے یہ بیان ایک ایسے موقع پر سامنے آیا ہے جب افغانستان میں متعین امریکی اور نیٹو افواج جنوبی صوبے ہلمند میں عسکریت پسندوں کے خلاف ایک بڑے فوجی آپریشن کا آغاز کرنے جارہی ہیں۔ افغانستان میں متعین غیر ملکی افواج کے سربراہ جنرل اسٹینلے میک کرسٹل نے اتوار کے روز اپنے ایک بیان میں کہا کہ اس آپریشن کا مقصد طالبان کو قتل کرنا نہیں بلکہ انہیں ایک واضح پیغام دینا ہے کہ افغان حکومت اپنے عمل داری ملک بھر میں بڑھا رہی ہے۔

میک کرسٹل کے مطابق کرزئی حکومت کی جانب سے اعتدال پسند طالبان کو معاشرتی دھارے میں شامل کرنے کی دعوت کے بعد طالبان کو اس آپریشن کے ذریعے اس پیشکش سے فائدہ اٹھانے پر مجبور کیا جاسکتا ہے۔

رپورٹ : عاطف توقیر

ادارت : عدنان اسحاق