1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

اعتدال پسند طالبان سے بات کی جا سکتی ہے، باراک اوباما

امریکی صدر باراک اوباما نے ’نیو یارک ٹائمز‘ کو دیے گئے ایک انٹرویو میں اس بات کا عندیہ دیا ہے کہ ان کی انتظامیہ افغانستان میں معتدل طالبان سے مذاکرات کرسکتی ہے۔

default

افغانستان میں جنگ نہیں جیت رہے ہیں، امریکی صدر اوباما

امریکہ کے پہلے سیاہ فام صدر باراک اوباما نے اخبار کو دیے گئے انٹرویو میں یہ بھی کہا کہ امریکہ افغانستان میں جنگ نہیں جیت رہا ہے اور وہاں کے حالات عراق سے زیادہ پیچیدہ ہیں۔

Barack Obama in Afganistan (Barack Obama Hamid Karzai)

افغان صدر کرزئی نے باراک اوباما کے بیان کا خیر مقدم کیا ہے


دریں اثناء افغانستان کے صدر حامد کرزئی نے باراک اوباما کے اس بیان کا خیر مقدم کیا ہے اور کہا ہے کہ ان کی حکومت عرصے سے ان طالبان کے ساتھ مذاکرات کی حمایت کر رہی ہے جو دہشت گرد نہیں ہیں۔

افغانستان کے دارلحکومت کابل میں خواتین کے بین الاقوامی دن کے موقع پر منعقد کی گئی ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے افغان صدر کرزئی نے کہا کہ وہ لوگ جو اپنے گھروں سے بے دخل ہونے کے بعد مجبوراً طالبان کا ساتھ دے رہے ہیں وہ حکومت کے ساتھ بات چیت کریں۔

Obama besucht Truppen in Afghanistan

صدر منتخب ہونے سے قبل اوباما نے افغانستان کا ذورہ کیا تھا اور وہاں تعینات امریکی افواج سے ملاقات کی تھی


یاد رہے کہ افغان صدر کرزئی نے سن دو ہزار پانچ میں ایک مصالحتی کمیشن تشکیل دیا تھا جس کا مقصد طالبان سے ہتھیار ڈلوانا تھا۔ افغان حکّام کے مطابق نسبتاً نچلے درجے کے کم از کم سات ہزار سات سو طالبان نے اس کے بعد ہتھیار حکومت کے حوالے کردیے تھے۔ تاہم طالبان عسکریت پسند حامد کرزئی کی مصالحتی پیشکش کو اب تک رد کرتے آ رہے ہیں۔

Taliban, Archivbild

کیا افغان طالبان باراک اوباما کی مذاکرات کی پیشکش کو قبول کریں گے؟


واضح رہے کہ امریکی صدر باراک اوباما نے جنوبی میں امریکہ کے چوالیسویں صدر کا حلف اٹھانے کے بعد افغانستان اور پاکستان کے حوالے سے امریکی پالیسی میں تبدیلی کا واضح اشارہ دیا تھا جس کے بعد انہوں نے اس علاقے کے لیے رچرڈ ہالبروک کو اپنا خصوصی نمائندہ مقرر کردیا تھا۔ امریکی صدر کا اعتدال پسند طالبان کے ساتھ بات چیت کا اشارہ غالباً اسی پالیسی پر عمل پیرا ہونے کی ایک کوشش ہے۔