1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

اسپین: کاتالونیا میں حالات بظاہر پرسکون

اسپین کی مرکزی حکومت نے آج پیر تیس اکتوبر سے کاتالونیا کا انتظام سنبھال لیا ہے۔ ذرائع ابلاغ کے مطابق بارسلونا میں قائم تمام وزراء اور سرکاری ادارے براہ راست میڈرڈ حکومت کے تابع ہوں گے۔

کاتالونیا کی علیحدگی پسند حکومت کی معطّلی کے دو روز بعد بارسلونا کے سرکاری محل کی سیاسی صورتحال قدرے پرسکون ہے۔ آج پیر کی صبح ’پالاؤ دے لا جینیرالیٹاٹ دے کاتالونیا‘ میں انتہائی کم سرگرمیاں دکھائی دیں۔ صرف چند سرکاری افسران ہی اس عمارت میں داخل ہوتے ہوئے دکھائی دیے۔ اس دوران یہ بھی علم نہیں کہ اختتام ہفتہ جیرونا میں گزارنے والے کاتالونیا حکومت کے برطرف سربراہ کارلیس پوج ڈیمونٹ اس وقت کہاں ہیں۔

مقامی خبر رساں اداروں کے مطابق ملکی دفتر استغاثہ آج پیر یا پھر منگل کو پوج ڈیمونٹ اور ان کے دیگر حکومتی ساتھیوں کے خلاف مقدمات کا اعلان کر دے گا۔ ان میں بارسلونا پارلیمان کی سابق اسپیکر کارمے فورسادیل بھی شامل ہیں۔ میڈرڈ حکومت کے نئے اقدامات کے بعد فورسادیل اکیس دسمبر کو ہونے والے انتخابات تک پارلیمان کی ایک مستقل کمیٹی کی سربراہ بھی ہیں۔ تاہم ملکی محکمہ انصاف کے اب تک کے منصوبوں کے مطابق ان افراد کو حراست میں نہیں لیا جائے گا۔

اگر پوج ڈیمونٹ اور فورسادیل پر ریاست کے خلاف بغاوت کے الزامات ثابت ہو گئے تو انہیں تیس سال تک کی سزا دی جا سکتی ہے۔ ہسپانوی وزیر اعظم ماریانو راخوئے کے مطابق یہ مرکزی انتظامیہ اکیس دسمبر کو ہونے والے عام انتخابات تک کاروبار حکومت چلائے گی۔ تاہم اس دوران کاتالونیا کے سابق سربراہ حکومت پوج ڈیمونٹ کے بارے میں کوئی اطلاع نہیں ہے۔ ابھی دو روز قبل ہی ملکی وزیر اعظم راخوئے نے اس علاقے  کی علیحدگی پسند حکومت کو معطل کر دیا تھا۔

عرصے سے نیم خود مختار چلے آ رہے کاتالونیا کا شمار اسپین کے اقتصادی طور پر مضبوط ترین خطوں میں ہوتا ہے۔

 

ویڈیو دیکھیے 00:53

’کاتالونیا اسپین کا حصہ ہی ہے‘

DW.COM

Audios and videos on the topic