1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

’اسرائیلی تعمیراتی منصوبہ امریکہ کی توہین ہے‘

امریکی صدر باراک اوباما کے مشیر ڈیوڈ ایکسلروڈ نے مشرقی یروشلم میں آبادی کاری کے اسرائیلی منصوبے کو امریکہ کی توہین قرار دیا ہے۔

default

ایک امریکی ٹیلی ویژن کے ساتھ انٹرویو میں انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم بنیامن نتین یاہو کی حکومت کا یہ منصوبہ خطے میں قیام امن کی کوششوں کے لئے تباہ کن ہے۔

قبل ازیں گزشتہ ہفتے امریکی نائب صدر جو بائیڈن کے دورہء اسرائیل کے موقع پر اسرائیلی وزارت داخلہ نے مشرقی یروشلم میں یہودی آبادکاری کے ایک منصوبے کا اعلان کر دیا تھا، جس کی بائیڈن نے مذمت کی تھی۔ اسرائیلی وزیر اعظم جو بائیڈن کی ملک میں موجودگی کے دوران یہ اعلان کئے جانے پر تحقیقات کا حکم دے چکے ہیں۔

نتن یاہو نے کہا ہے کہ بائیڈن کی ملک میں موجودگی کے دوران یہ اعلان کیوں کیا گیا، اس کی چھان بین

David Axelrod Bildergalerie Kabinett

امریکی صدر باراک اوباما کے مشیر ڈیوڈ ایکسلروڈ

کرائی جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ ایسے اعلان کے لئے وقت کا انتخاب درست نہیں تھا، جس کے لئے وہ معذرت چاہتے ہیں۔ تاہم انہوں نے یہ منصوبہ واپس لینے کا عندیہ نہیں دیا۔ اسرائیل نے مشرقی یروشلم کے علاقے Ramat Shlomo میں سولہ سو نئے گھر تعمیر کرنے کا اعلان کیا ہے۔

امریکی وزیر خارجہ ہلیری کلنٹن نے گزشتہ جمعہ کو اسرائیلی وزیر اعظم نتن یاہو سے ٹیلی فون پر گفتگو میں اسرائیل کے اس منصوبے کو ایک منفی کارروائی قرار دیا تھا۔

امریکہ اور یورپی یونین سمیت عالمی برادری مشرقی یروشلم کو مقبوضہ علاقہ تصور کرتی ہے اور وہاں اسرائیل کے تعمیراتی منصوبوں کو بھی بین الاقوامی قوانین کے تحت غیرقانونی قرار دے چکی ہے۔ تاہم اسرائیل مشرقی یروشلم کو اپنا علاقہ قرار دیتا ہے، جسے اس نے 1967ء میں اپنی ریاستی حدود میں شامل کر لیا تھا۔

اس تعمیراتی منصوبے کے منسوخ نہ کئے جانے کی صورت میں فلسطینی اسرائیل کے ساتھ بلاواسطہ مذاکرات کا بائیکاٹ کرنے کی دھمکی دے چکے ہیں۔

رپورٹ: ندیم گِل / خبررساں ادارے

ادارت: مقبول ملک

DW.COM