1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

حالات حاضرہ

آپریشن مشترک ایک مہینے میں مکمل ہو گا، نیٹو کمانڈر

جنوبی افغانستان میں تعینات نیٹو افواج کے برطانوی کمانڈر میجر جنرل نِک کارٹر نے کہا ہے کہ آپریشن مشترک میں شامل فورسز کو طالبان کے زیرقبضہ علاقوں پر مکمل کنٹرول حاصل کرنے کے لئے مزید 25 سے لے کر 30 دن تک درکار ہوں گے۔

default

میجر جنرل نِک کارٹر کا کہنا ہے کہ ہلمند کو شدت پسندوں سے خالی کرانے کے بعد تین ماہ میں یہ اندازہ ہو جائے گا کہ آپریشن مشترک کہاں تک کامیاب رہا۔ انہوں نے کہا ہے کہ مرجا میں طالبان مزاحمت کر رہے ہیں اور علاقے میں بارودی سرنگوں کی موجودگی کے باعث اتحادی افواج کی پیش قدمی سست ہے۔

Karte Afghanistan mit Provinz Helmand UPDATE: mit der Stadt Mardscha Marjah Marjeh

مرجا کا علاقہ طالبان کا گڑھ رہا ہے

اُدھر امریکی محکمہ دفاع پینٹاگون کے ترجمان جیف موریل نےکہا ہے کہ مرجا میں طالبان کی جانب سے مزاحمت منظم نہیں ہے۔ جیف موریل نے کہا کہ امریکہ اس آپریشن کے اب تک کے نتائج سے خوش ہے۔

تاہم نِک کارٹر کا کہنا ہے کہ اس وقت وہ فتح کا نعرہ لگانے کے حق میں نہیں۔ انہوں نے آئندہ چھ ماہ میں قندھار سمیت دیگر شمالی علاقوں میں بھی ایسی ہی کارروائی کا عندیہ بھی دیا۔

دوسری جانب قندوز کے گورنر محمد عمر نے کہا ہے کہ نیٹو افواج آئندہ ایک سے دو برس میں شمالی اور شمال مشرقی علاقوں سمیت ملک بھر سے طالبان کے خاتمے کا ارادہ رکھتی ہیں۔

دوسری جانب نیٹو کے مطابق جمعرات کو آپریشن مشترک کے دوران چار اتحادی فوجی ہلاک ہو گئے۔ انٹرنیشنل سیکیورٹی اسسٹنس فورس کے اعلامیے کے مطابق تین فوجی بارودی سرنگوں کا نشانہ بنے جبکہ ایک فائرنگ کے تبادلے میں ہلاک ہوا۔ اعلامیے میں ان فوجیوں کی قومیتیں نہیں بتائی گئیں۔

تاہم برطانوی وزارت دفاع نے اپنے ایک علٰیحدہ بیان میں کہا ہے کہ جمعرات کو آپریشن مشترک کے دوران اس کے دو فوجی ہلاک ہوئے۔ اس آپریشن کے دوران اب تک ہلاک ہونے والے غیرملکی فوجیوں کی تعداد اب نو ہو گئی ہے۔

افغانستان کے جنوبی صوبے ہلمند کے وسطی علاقوں مرجا اور ناد علی میں نیٹو کا یہ آپریشن گزشتہ ہفتہ کو شروع ہوا۔ اس میں 15 ہزار اتحادی فوجی شریک ہیں۔ مغربی دفاعی اتحاد نیٹو کے مطا بق علاقے میں موجود طالبان کی تعداد چار سو سے ایک ہزار تک ہو سکتی ہے۔

NO FLASH Afghanistan Großoffensive U.S. Marines

فوجیوں کو ہیلی کاپٹروں کی مدد سے علاقے میں اتارا گیا

افغانستان میں تعینات نیٹو کے فوجیوں کی مجموعی تعداد ایک لاکھ 13 ہزار ہے۔ امریکہ وہاں اپنے مزید 30 ہزار فوجی بھیجنے کا اعلان کر چکا ہے جبکہ نیٹو کے دیگر ممالک نے بھی دس ہزار اضافی فوجیوں کی تعیناتی کا اعلان کیا ہے۔

رپورٹ: ندیم گِل

ادارت: مقبول ملک

DW.COM