1. Inhalt
  2. Navigation
  3. Weitere Inhalte
  4. Metanavigation
  5. Suche
  6. Choose from 30 Languages

سائنس اور ماحول

آسٹریلیا گوگل کے خلاف تفتیش کرے گا

آسٹریلوی حکومت نے انٹرنیٹ کمپنی گوگل پر صارفین کے نجی کوائف کی مبینہ طور پر درست نگرانی نہ کرنے کے الزام میں تفتیش کا حکم جاری کر دیا ہے۔ یہ بات آسٹریلوی اٹارنی جنرل نے اپنے ایک بیان میں کہی ہے۔

default

گزشتہ ماہ رابطے کے امور کے وزیر سٹیفن کونروئے نے گوگل پر الزام عائد کیا تھا کہ اس کمپنی نے گوگل میپ کے لئے وائرلیس ڈیٹا کے ذریعے گلیوں کی تصاویر لیتے ہوئے پرائیویسی کا خیال نہیں رکھا۔

Google Gründer Larry Page, links, und Sergey Brin

گوگل کو یورپ میں بھی صارفین کے نجی کوائف کی نگرانی کے حوالے سے تنقید کا سامنا ہے

آسٹریلوی اَٹارنی جنرل رابرٹ مک کلے لینڈ نے اتوار کے روز اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ حکومت نے وفاقی پولیس کو ہدایات دی ہیں کہ وہ اس حوالے سے شہریوں کی جانب سے موصول ہونے والی درجنوں شکایات پر کارروائی کرتے ہوئے اپنی تفتیش شروع کریں۔’’ظاہر ہے، میں تفتیشی رپورٹ سے قبل کوئی بات تو نہیں کہوں گا۔ تاہم ممکنہ طور پر کمپنی کی جانب سے آسٹریلیا کے کمیونیکشن قانون توڑنے کا ارتکاب ہوا ہے، جس کے باعث عوام کی ذاتی معلومات مختص جگہ کی بجائے دیگر مقاصد کے لئے استعمال ہوئی۔‘‘

رابرٹ مک کلے لینڈ نے مزیدکہا کہ گوگل کے خلاف حتمی طور پر کوئی مقدمہ یا الزام صرف پولیس عائد کرے گی۔حکومت کا خیال ہے کہ ایسی شکایات کی صورت میں پولیس تفتیش انتہائی ضروری ہے۔

دوسری طرف گوگل کے ترجمان نے اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ اس نے صارفین کا یہ ڈیٹا غلطی سے حاصل کر لیا تھا۔

’’یہ ایک غلطی تھی۔ ہم اس حوالے سے تمام سوالات کے جوابات دینے کے لئے تیار ہیں۔‘‘

رپورٹ : عاطف توقیر/خبر رساں ادارے

ادارت : گوہر نذیر گیلانی

DW.COM